ریسکیو1122کو خود مختار ادارہ بنا دیا گیا ہے۔ مسلم لیگ ق لیگ کی رکن خدیجہ عمر نے ریسکیو ایمرجنسی ترمیمی بل 2021ء ایوان میں پیش کیا، جسے کثرت رائے سے منظور کر لیا گیا۔ سپیکر پنجاب اسمبلی چوہدری پرویز الٰہی نے اپنے دور وزارت علیا میں دکھی انسانیت کی مدد کے لئے ریسکیو1122کا ادارہ بنایا تھا جس کے ثمرات کے مخالفین بھی معترف ہیں۔یہی وجہ ہے کہ میاں شہباز شریف پرویز الٰہی کے اس منصوبے کو بند نہ کر سکے بلکہ اس منصوبے کو پنجاب بھر میں پھیلانے کی کاوشیں کیں۔ضلع کی سطح سے تحصیل اور پھر یونین کونسل تک اس کے دفاتر بنا کر اس نیٹ ورک کو پھیلایا۔ گزشتہ 12بارہ برس سے اس ادارے کو نہ تو خود مختاری دی گئی نہ ہی اس کے قواعد و ضوابط بنا کر ملازمین کی ترقی‘پروموشن جیسا کوئی قدم اٹھایا گیا۔ جس کے باعث اس ادارے میں کام کرنے والے ملازمین ہمہ وقت پریشان رہتے۔ عدم تحفظ اور نفسیاتی دبائو کے باعث وہ دلجمعی سے کام بھی نہیں کر سکتے تھے۔ سپیکر پنجاب اسمبلی چودھری پرویز الٰہی نے اپنے ہاتھوں سے لگائے اس پودے کو مستحکم کیا ہے‘ اسے خود مختار ادارہ بنا کر ملازمین کے پروموشن کورس سمیت ان کی ترقی کے لئے قواعد و ضوابط بنانے کا بھی بل پاس کیا ہے۔ اس سے نہ صرف ملازمین دلجمعی سے فرائض منصبی ادا کرینگے بلکہ آگے بڑھنے کی لگن اس ادارے کو مزید چار چاند لگائے گی۔