اسلام آباد (این این آئی،اے پی پی)احتساب عدالت اسلام آباد کے جج محمد بشیر نے سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار کے خلاف آمدن سے زائد اثاثہ جات ریفرنس میں دو مزید گواہوں کے بیان ریکارڈ کر لیے جبکہ عدالت نے ایک گواہ آفتاب کو ریکارڈ کے ساتھ 30 جنوری کو عدالت میں پیش ہونے کا حکم دیدیا ۔ بدھ کوریفرنس کی سماعت ہوئی توتین شریک ملزمان میں سے ایک منصور رضا رضوی عدالت میں پیش ہوئے ۔ دو ملزمان سابق صدر نیشنل بنک سعید احمد اور نعیم محمود کے عدالت میں پیش نہ ہونے پر نیب پراسیکیوٹر نے اعتراض کیا جس پر وکیل صفائی قاضی مصباح نے کہا سماعت کے دوران ایک ملزم کا حاضر ہونا ضروری ہے ، دیگر ملزم آئندہ سماعت پر پیش ہو جائیں گے ۔ احتساب عدالت اسلام آباد نے مضاربہ کیس کرپشن ریفرنس میں غلام رسول ایوبی کو دس سال قید اور 3 ارب 70 کروڑ روپے جرمانے کی سزا سنادی ۔ ایک اور مضاربہ کیس میں احتساب عدالت نے ملزم چیف ایگزیکٹو آفیسر میسرز فیاض گروپ آف انڈسٹریزمفتی احسان الحق کو دس سال قید اور 9 ارب روپے جرمانہ جبکہ دیگر 9 شریک ملزموں کو ایک ارب روپے جرمانہ کی سزا سنائی۔ یہ نیب کی سب سے بڑی سزا ہے ۔