اسلام آباد (وقائع نگار خصوصی) چیئرمین سینٹ صادق سنجرانی نے کہا ہے کہ پارلیمنٹر ینز کو بہترین پارلیمانی خدمات کی فراہمی اور متعلقہ افسران کی تربیت کیلئے پاکستان انسٹی ٹیوٹ آف پارلیمانی سروسز کو مزید فعال بنایا جائیگا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے پاکستان انسٹی ٹیوٹ آف پارلیمانی سروسزکے بورڈ آف گورنرز کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں سینٹ کے قائد ایوان سینیٹر شبلی فراز، وفاقی وزیر پارلیمانی امورسینیٹر اعظم سواتی، سینیٹر رحمان ملک، امجد علی خان، نفیسہ عنایت اﷲ خٹک، سینیٹر شیری رحمان ، شاہدہ اختر علی اور سینئر افسران نے شرکت کی۔ اجلاس کے دوران پارلیمانی انسٹی ٹیوٹ کے ایگزیٹوڈائریکٹر کی تقرری کے عمل کا جائزہ لیا گیا۔ اجلاس کو بتایا گیا کہ ایگزیکٹوڈائریکٹر کی تقرری کیلئے اخبارات میں دوبارہ تشہیر کی گئی جسکے نتیجے میں امیدوارں کی ایک حوصلہ افزا تعداد نے درخواستیں دیں۔ بورڈ آف گورنرز نے تقرری کا عمل جلد مکمل کرنیکی ہدایت کی۔چیئرمین سینٹ اور انسٹی ٹیوٹ کے بورڈ آف گورنرز کے صدر صادق سنجرانی نے کہا کہ پارلیمانی تربیت کا دائرہ کار وفاقی اور صوبائی حکومتوں کے مختلف گروپوں سے تعلق رکھنے والے ملازمین تک بھی بڑھایا جائے تاکہ قانون سازی سے متعلق بنیادی امور سے آگہی حاصل ہو سکے ۔ انہوں نے کہا کہ پارلیمنٹرینز کو بہترین خدمات کی فراہمی اور قانون سازی میں معاونت کیلئے انسٹی ٹیوٹ کو زیادہ سہولیات فراہم کی جائیں گی۔ اس سلسلے میں خالی آسامیوں کو پُر کرنے کیلئے بھی اقدامات کئے جائیں گے ۔