مکرمی !گزشتہ کئی سالوں سے یکم اپریل پر لوگ ایک دوسرے کو بیوقوف بناتے چلے آرہے ہیں۔ جس سے دوسرے لوگوں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ اپریل فول ڈے ہمارے معاشرے میں تیزی سے بڑھتا جا رہا ہے۔فول ڈے کا مطلب جھوٹ بولنا ہے۔ یہ انگریزوں کی سوچی سمجھی سازش ہے جس سے ہم لوگ ایک دوسرے کا اعتمادکھو بیٹھتے ہیں۔ اپریل فول ڈے آخر ہے کیا چیز جو لوگ پورے سال ایک دن کیلئے دوسرے لوگوں کو بیوقوف بناتے ہیں۔ ہمیں چاہیے کہ ایسا ہرگز نہ کریں جس سے کسی انسان کو کوئی ایسی تکلیف پہنچے جس سے اس کے احساسات کو ٹھیس پہنچے اور وہ بہت کچھ گنوادے۔ہم سب فول ڈے پر ایک دوسرے کو کال کرتے ہیں اور جھوٹ بولتے ہیں ایسا کرنے سے ہم گناہ گار بھی بنتے ہیں اور دوسرے لوگوں کی نظروں میں گرجاتے ہیں۔پاکستان سمیت دنیا بھر کے دوسرے ممالک میں بھی اپریل فول ڈے بہت تیزی سے مقبول ہو رہا ہے۔یہ سب فضول رسومات ہیں۔اپریل فول ایک ایسا جھوٹ ہے جو کسی نہ کسی انسان کی جان بھی لیجاتا ہے۔اس لیے ہم سب کو چاہیے کہ کسی انسان کی دل آزاری نہ کریں اس سے اللہ پاک بھی ناراض ہوتا ہے۔ (رانا محمد اقرار )