کراچی ( سٹاف رپورٹر ) احتساب عدالت کراچی نے کے پی ٹی میں غیر قانونی بھرتیوں ، اختیارات کے ناجائز استعمال اوربدعنوانی کے ریفرنس میں نامزد ملزم سابق وفاقی وزیر بابر غوری کو اشتہاری قرار دینے سے متعلق نیب کی کارروائی کی رپورٹ منظور کرلی ،دوران سماعت رکن سندھ اسمبلی جاوید حنیف اوردیگر ملزمان عدالت میں پیش ہوئے ، نیب نے مفرور ملزم بابر غوری کے خلاف اشتہاری قرار دینے سے متعلق رپورٹ پیش کی اور عدالت کو بتایا کہ ملزم کے خلاف زیر دفعہ 87(خاکے آویزاں)کی کارروائی مکمل ہوگئی ہے ، متعلقہ تھانوں میں ملزم کے مفرور ہونے کے اشتہار آویزاں کردیے ہیں۔ بابر غوری کے خلاف زیر دفعہ 88 کے تحت جائیداد کی ضبطگی کے حوالے سے کارروائی جاری ہے ۔سندھ سے ملزم کی جائیداد کی تفصیلی رپورٹ بھی موصول ہوچکی تاہم پنجاب ، بلوچستان اور کے پی کے سے تاحال تفصیلات موصول نہیں ہوئیں، تینوں صوبوں کے چیف سیکرٹریز کو دوبارہ لیٹر لکھے ہیں،تفصیلات موصول ہونے کے لئے وقت دیا جائے ، عدالت نے نیب کی درخواست منظور کرکے سماعت 17اکتوبر تک ملتوی کردی ۔ریفرنس میں ایم پی اے جاویدحنیف، روف اختر فاروقی اور دیگر ملزمان گرفتار جبکہ بابر غوری تاحال مفرور ہیں۔