انقرہ (این این آئی)ترک حکام نے کم از کم مزید 260 عسکری عہدیداروں کو گرفتار کرنے کے احکامات جاری کردیئے ۔ ان میں بری، فضائیہ اور نیوی کے ملازمین شامل ہیں۔ ان افراد پر شک ہے کہ یہ 2016ء کی ناکام فوجی بغاوت میں ملوث تھے ۔ انقرہ حکام، حکومت کا تختہ الٹنے کی اس کوشش کی ذمہ داری مبلغ فتح اﷲ گولن پر عائد کرتے ہیں جس کی وہ تردید کرتے ہیں۔ گولن امریکہ میں خود ساختہ جلا وطنی کی زندگی گزار رہے ہیں۔