اسلام آباد(نامہ نگار)جمعیت علماء اسلام (ف )کے رہنما اکرم درانی آمدن سے زائد اثاثہ جات، غیر قانونی بھرتیوں اور مساجد کے پلاٹس کی الاٹمنٹ سے متعلق کیسز میں چوتھی مرتبہ نیب راولپنڈی میں پیش ہوگئے اورمشترکہ تحقیقاتی ٹیم کے سوالوں کا جواب دیا۔نیب راولپنڈی کی مشترکہ تحقیقاتی ٹیم نے اڑھائی گھنٹے تک جے یو آئی (ف) رہنما سے تفتیش کی۔میڈیا سے گفتگو میں اکرم درانی نے نیب کو چیلنج کرتے ہوئے کہا الیکشن کمیشن میں پیش کئے گئے اثاثوں کے علاوہ اثاثے ثابت کیے جائیں۔ انہوں نے پاکستان کا نام ایف اے ٹی ایف کی لسٹ میں شامل ہونے کا ذمہ دار نیب کو قراردیا۔