کراچی (سٹاف رپورٹر) رحیم یارخان میں اکبر ایکسپریس حادثے کے بعد سے کراچی میں بھی ریلوے نظام درہم برہم ہو کر رہ گیا۔ مسافر ٹرینوں کی آمد و روانگی میں12,12 گھنٹے تاخیر ہوئی ۔ریلوے کا انکوائری نمبر بھی غیر فعال رہا۔مسافر رل گئے ، کوئی پرسان حال نہیں جبکہ ٹرینوں کے شیڈول کو متاثر ہوئے 22 روز ہو گئے ہیں ۔ریلوے ورکرز یونین نے وفاقی وزیر شیخ رشید احمد سے فوری مستعفی ہونے کا مطالبہ کر دیا۔ورکرز یونین کے چیئرمین منظور رضی نے کہا ٹرین حادثوں کے متعدد واقعات ہوچکے ہیں ،جس کے باعث ریلوے کے کئی انجن اور بوگیاں تباہ ہوئی اور ریلوے کو کروڑوں روپے کا نقصان ہوا ،وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید فوری طور پر مستعفی ہوجائیں ۔