نئی دہلی (نیٹ نیوز) بھارت اور بنگلہ دیش میں سمندری طوفان امپھان 84 زندگیاں نگل گیا، 30 لاکھ افراد کو محفوظ مقامات پر منتقل کردیا گیا۔خبر رساں ادارے کے مطابق سمندری طوفان سے کولکتہ سمیت کئی شہروں میں تباہی آئی ہے ، بنگلہ دیش میں بھی بڑے بڑے درخت جڑ سے اکھڑ گئے ۔ وزیراعلیٰ ممتا بینر جی کا کہنا ہے کہ مغربی بنگال میں 72 شہری ہلاک ہوئے ۔ طوفان کا نقصان کورونا سے زیادہ ہو سکتا ہے ،وزیراعلیٰ ممتا بنرجی کا کہنا ہے کہ طوفان کے باعث مغربی بنگال میں ہزاروں مکانات کی چھتیں اڑ گئی ہیں اور درخت اکھڑ گئے ہیں۔طوفان کے باعث کلکتہ ائیرپورٹ بھی شدید متاثر ہوا ہے اور ہوائی اڈے کا ایک حصہ پانی میں ڈوب گیا ہے جبکہ کئی جہازوں کو نقصان بھی پہنچا ہے ۔سمندری طوفان امفان نے بنگلہ دیش کے 3 ساحلی اضلاع کو بھی متاثر کیا جبکہ 12افراد جان سے ہاتھ دھوبیٹھے ہیں۔