اسلام آباد(خبر نگار)جمعہ کو سپریم کورٹ کے کمرہ عدالت نمبر پانچ میں اس وقت دلچسپ صورتحال پیدا ہوگئی جب عدالت میں مقدمات کی سماعت مکمل ہونے کے بعد جج اٹھنے لگے تو قاصد موجود نہیں تھے ۔جسٹس منصور علی شاہ کی سربراہی میں سماعت کرنے والا دو رکنی بنچ اٹھنے لگا تو عدالت میں موجود تمام سینئر وکلا ججزکو اور ججز وکلا کو دیکھتے رہے ۔ جسٹس منصور علی شاہ اور جسٹس یحیی آفریدی نے مڑ کر نشست کی طرف دیکھا تو کوئی قاصد موجود نہ تھاعدالتی عملے کی قاصدوں کو بلانے کیلئے دوڑیں لگ گئیں،اس دوران ایک قاصد پہنچا تو قد چھوٹا ہونے کے باعث دروازہ کھولنے کیلئے کنڈی تک اس کا ہاتھ نہ پہنچ سکا۔اس صورتحال کو دیکھ کر ججز بھی ہنستے رہے جسٹس منصور علی شاہ نے مسکراتے ہوئے کہا کہ ہم انڈیپنڈنٹ ہیں لیکن ساتھ ہی ہم دوسروں پر ڈپیڈنٹ بھی ہیں۔