ڈھاکہ ( اے ایف پی ) بنگلہ دیش میں وزیر نے کہا ہے کہ حکومت اپوزیشن لیڈر خالدہ ضیا کو علاج کرانے کیلئے 6 ماہ کیلئے جیل سے رہا کر دے گی، وزیر قانون انیس الحق نے اے ایف پی کو بتایا کہ خالدہ ضیا کے بھائی اور بہن نے وزیر اعظم شیخ حسینہ سے درخواست کی تھی کہ دو سال سے قید خالدہ ضیا کو علاج کیلئے لندن جانے کی اجازت دی جائے ، انیس الحق نے کہا 74 سالہ خالدہ ضیا کو کسی اور ملک جانے کی اجازت نہیں دی جائے گی، ان کی درخواست اور وزیر اعظم کی ہدایت پر ان کی سزا کو معطل کردیا گیا ، انہیں اس شرط پر رہا کیا جائے گا کہ وہ ڈھاکہ میں اپنی رہائش گاہ پر علاج کرائیں اور بیرون ملک نہیں جائیں گی، خالدہ ضیا کو بدعنوانی کے الزامات میں 10 سال قید کی سزا سنائی گئی تھی، وہ اس وقت تین درجن کے قریب مزید کیسز کا بھی سامنا کر رہی ہیں۔ ایک حالیہ میڈیکل رپورٹ کے مطابق خالدہ ضیا کی صحت کافی خراب اور ان کی گھنٹیا کی بیماری بگڑ چکی ہے ۔ ان کے پہلے ہی گھٹنے کے دو آپریشن ہو چکے ہیں۔