لاہور(جوادآراعوان) مسلم لیگ (ن)کی مرکزی نائب صدر اور سزا یافتہ سابق وزیر اعظم کی صاحبزادی مریم نواز کا نیو دہلی میں سی این این کے بیورو چیف کو لکھا گیا خط اصل ہے جس میں انہوں نے اپنے والد کی سزا کو غلط قرار دیتے ہوئے اور اپنی جماعت کیخلاف مبینہ حکومتی کارروائیوں کو روکنے کیلئے سی این این کے پلیٹ فارم کو استعمال کر کے ایک پروپیگنڈا مہم لانچ کرنے کی کوشش کی ہے ۔ مریم نواز نے ایک ٹویٹ کے ذریعے اس خط کے جعلی ہونے کا دعویٰ کیا ہے لیکن اعلی سیاسی اور باخبر سرکاری ذرائع جو (ن) لیگ کی اعلی قیادت کے قریب رہ چکے ہیں، نے روزنامہ92نیوزکو بتایا کہ سزا یافتہ سابق وزیر اعظم کی صاحبزادی کا سی این این کے نیو دہلی میں بیورو چیف کو پچھلے ماہ کے آخری ہفتے میں لکھا گیا خط اصل ہے جس میں انہوں نے اپنے خاندان کیخلاف مختلف کیسز اور اپنے والد کی سزا معاف کرانے اور مغربی بین الاقوامی قوتوں کے ذریعے این آر او لینے کیلئے حکومت اوراداروں کیخلاف پروپیگنڈا مہم چلانے کیلئے مدد لینے کی کوشش کی جبکہ رواں ماہ کے تیسرے ہفتے میں اس مہم کا آغاز کرنے کیلئے انٹرنیشنل چینل کو انٹرویودینا تھا۔ اس خط کے بارے میں مریم نواز اور ان کے چند قریبی پارٹی رہنمائوں کو علم ہے ۔ن لیگ کے اندر یہ وہ رہنما ہیں جن کیخلاف کرپشن کیس ہیں اور ان میں کچھ سابق وزیر اعظم کی کچن کیبنٹ کا حصہ مانے جاتے تھے ۔ مریم نواز نے سی این این نیو دہلی کے بیورو چیف سے رابطہ اپنے والد کے پرانے دوست اور مشہور انڈین بزنس مین سجن جندال کے ذریعے کیا۔یاد رہے مودی سرکار کے تحت پاکستان مخالف پروپیگنڈا کارروائیوں کی ایک منظم مہم چلائی جا رہی ہے ، اس مہم کے تحت کچھ عرصہ قبل وزیر اعظم کی سابق اہلیہ ریحام خان نے لندن میں ایک بھارتی چینل کواپنی کتاب کے متعلق خصوصی انٹرویو دیا جس کا ٹارگٹ وزیراعظم پاکستان اور اہم ملکی ادارے تھے ۔