لاہور،سندر (سٹاف رپورٹر، نامہ نگار خصوصی، نامہ نگار،مانیٹرنگ ڈیسک،نیوز ایجنسیاں )مسلم لیگ ن کی نائب صدرمریم نواز نے کہاہے عمران خان نے اپنے سلیکٹرز کی مٹی پلید کردی،جس طرح کے ملک کے حالات ہوچکے ہیں اس میں حکومت کاجانابنتاہے ، اگر شہباز شریف بھائی کو دھوکہ دیتے توعمران خان پر کسی کی نظر نہ پڑتی، شہبازشریف اور حمزہ نوازشریف سے وفاداری کی وجہ سے قیدکاٹ رہے ہیں،عمران خان کوتواس قابل بھی نہیں سمجھتے کہ لوگ اس کوالزام دیں،حکومت مزیدنہیں چل سکتی۔جاتی عمرہ میں صحافیوں سے گفتگومیں انہوں نے کہاشہباز شریف نے بھائی کے لیے بہت کچھ قربان کیا،کبھی چچا بھتیجی کی لڑائی اور کبھی دو بیانیے کاکہا جاتا ہے مگر ہم ایک ہیں ، پارٹی متحدہے ، میری دادی آخر وقت تک کہتی رہیں شہباز، نواز شریف کا ساتھ دینا،گیس کا بحران آنے والا ہے ، حکومت اسرائیل کی بات کررہی ہے ،کشمیر کا آپ مقدمہ ہار چکے ،اگر عمران خان کے بغیر لوگوں کو کٹھ پتلی کا بتاتے تو شاید انہیں سمجھ نہ آتی ، خوش قسمت ہے عمران خان کہ لوگ الزام بھی اسکے بڑوں کو دے رہے ہیں، ملتان جلسے میں شرکت کروں گی،نوازشریف نے مجھے شرکت کی ہدایت کی ہے ،لوگ اٹھ رہے ہیں،جسٹس قاضی فائزعیسیٰ سے آج تک نہیں ملی،اگرعدلیہ سٹینڈلے اورآلہ کار بننا چھوڑ دے تو یہ حالات نہ ہوں،جسٹس وقارسیٹھ تاریخ میں امرہوگئے ،اٹک جیل میں فنگس والی ادویات کھانے پرمجبورتھی،مجھے چوہوں کابچاہواکھاناکھلایاجاتاتھا، وقت آنے پر بتائوں گی میرے ساتھ جیل میں کیا سلوک کیا گیا،نواز شریف جب جیل میں تھے تو عمران خان کو رپورٹ مل گئی تھی کہ ان کی طبیعت خطرناک حد تک خراب ہے ،عمران خان ڈر گئے تھے اس لئے علاج کرانے کیلئے باہر بھیجا ۔لیگی چوہدری شہزاد نذیر نے جاتی عمرہ میں مریم نواز سے ملاقات کرکے دادی کے انتقال پر تعزیت کی۔میڈیا سے گفتگو میں مریم اورنگ زیب نے کہا والدہ کی وفات کے چوتھے دن بھی شہباز شریف کو رہا نہیں کیا گیا،نیب نیازی گٹھ جوڑ نے مرحومہ کلثوم نوازکے مری کے گھر پر دھاوا بولا، بغیر نوٹس یا اطلاع اندر گھسنے کی کوشش کی گئی، وڈیوز بنائیں۔رانا ثنا اللہ نے کہاشہباز شریف کی دو ہفتوں سے کم پیرول پررہائی منظور نہیں، بلاول بھٹو جلسے سے ویڈیو لنک خطاب کریں گے ، ملک کو سب سے زیادہ خطرہ عمران کورونا ہے ۔عطا اﷲ تارڑ نے کہافیصل واوڈا دوہری شہریت کا حامل ہے لیکن اس کے کیس کو جان بوجھ کر التوا میں رکھا جا رہا ہے ،اسرائیل کو تسلیم کرنے کی باتیں ہو رہی ہیں کیونکہ ابھی تک فارن فنڈنگ کیس کا فیصلہ نہیں آیا ۔