لاہور(وقائع نگار) ترجمان وزیراعلیٰ پنجاب ڈاکٹر شہباز گل نے کہا ہے کہ جس کو وزیراعلیٰ پنجاب پسند نہیں وہ تحریک انصاف چھوڑ دے ۔ وزیراعلیٰ پنجاب کو وزیراعظم نے لگایا اور وزیراعلیٰ کا پیغام ہے جب عمران خان انہیں بٹائیں گے وہ 12 گھنٹے میں گھر چلے جائیں گے ۔پریس کانفرنس کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ بھارت نے کشمیر کو عقوبت خانہ بنا دیا ہے اور افسوناک بات ہے کہ دنیا کے کئی ممالک کشمیر کی صورتحال پر خاموش ہیں،انہوں نے مزید کہا کہ وزیراعظم کی جانب سے وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے صوبائی کابینہ کو پیغام دیا کہ پولیس کا کام عوام کی خدمت کرنا ہے ۔ شہباز گل نے کہا کہ پولیس کی خرابی کی ذمہ دار کوئی ایک حکومت نہیں، سانحہ ماڈل ٹاؤن گزشتہ حکومت نے خود کرایا اور پھر ذمہ داری پولیس پر ڈال دی۔ انہوں نے مزید کہا ہر ڈی پی او اور ڈی ایس پی اپنے حلقے سے متعلق حلف نامہ جمع کرائے گا۔ حلف نامے میں بتایا جائے گا کہ حدود میں کوئی تشدد کیلئے مرکز قائم نہیں۔ وزیراعلیٰ پنجاب نے کسی بھی واقعہ کیلئے بورڈ تشکیل دینے کی ہدایت کی ہے ۔ بورڈ میں ہر شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے افراد شامل ہوں گے ۔ ڈاکٹر شہباز گل ہر تھانے کے اندر ایک اہلکار عوام کے ساتھ تعلقات عامہ کا کردار نبھائے گا۔ ہر تھانے کے قریب شکایات کے لیے ایک ڈبہ رکھا جائے گا اس ڈبے کی چابی صرف ڈی پی او یا آر پی او کے پاس ہو گی۔