لاہور، اسلام آباد (92 نیوزرپورٹ، این این آئی ) نائب صدرمسلم لیگ (ن ) مریم نوازنے بیرون ملک نہ جانے کااعلان کردیا۔اپنی ٹویٹ میں مریم نوازنے کہا مجھے زبردستی باہر بھجوانے کیلئے ڈرامہ رچایاجارہا،کان کھول کر سن لیں میں کہیں نہیں جا رہی۔ جعلی اور ووٹ چور وزیراعظم سے کسی قسم کی درخواست کرنے کا سوچنا بھی گناہ ہے ،ووٹ چوروں کی کسی کی نظرمیں کوئی حیثیت ہے نہ اتھارٹی ،جعلی ای سی ایل اورجعلی اجازت اپنے پاس محفوظ رکھیں،بہت جلد آپ کواسی ای ایل کی ضرورت پڑے گی۔ وزیراعظم کے خطاب پر ردعمل میں مریم نوازنے کہا صبح اُٹھ کر جہاد پر نہیں جاتے ، عوام کے حق پر ڈاکہ ڈالنے جاتے ہو، غریب کے منہ سے روٹی اور بیمار سے دوائی چھیننے جاتے ہو، لوگوں کی بجلی اور گیس کے بلوں سے کمر توڑنے جاتے ہو ،مہنگائی،آٹا ، چینی ، گیس ، ووٹ چوری ، نا اہلی اور نا لائقی کوجہاد کہتے ہو؟ادھر مسلم لیگ (ن) کی ترجمان مریم اورنگزیب نے وزیراعظم عمران خان کو ذہنی آرام کا مشورہ دیدیا ۔ اپنے بیان میں مریم اور نگزیب نے کہا عمران صاحب پہلے وضاحت کریں آپ سوتے ہوئے یا ہوش میں بیان دیتے ہیں ،عمران صاحب نے مان لیا وہ آئی ایم ایف کی ڈکٹیشن پر کام کررہے ہیں۔ عمران صاحب قرضوں پر لیکچر نہ دیں، اپنے قرض کمیشن کی رپورٹ قوم کے سامنے لائیں۔مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنما سینیٹر مصدق ملک نے نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے دعویٰ کیا کہ عمران خان نے نریندر مودی کو خط میں آرٹیکل 370 کے خاتمے پر بات کی نہ اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق مسئلہ کشمیر کے حل کا کوئی ذکر کیا۔(ن) لیگ دور میں بھی بھارت سے تجارت ہورہی تھی لیکن اسوقت آرٹیکل 370 ختم نہیں ہوا تھا۔ سینٹ میں چیئرمین، ڈپٹی چیئرمین اور قائد حزب اختلاف بھی بلوچستان عوامی پارٹی کی مدد سے آیا لیکن ہم باپ کیساتھ بیٹھنے کو تیار نہیں، اسی لئے ہمارے 27 سینیٹر سینٹ میں الگ گروپ بنائیں گے ۔