BN

کالم



آج کے کالم 


  


کالم آرکیو



مرد کی عزت اور سماج

منگل 22 اکتوبر 2019ء
قدسیہ ممتاز
مرد بیچارہ ساری عمر اپنی عزت کی چارپائی سر پہ ڈھوئے گوشہ ء عافیت ڈھونڈتا رہتا ہے جہاں دو گھڑی اسے بچھا کر سستا سکے۔غریب کو علم ہی نہیں کہ ایسا نادر موقع ہاتھ لگ بھی جائے تب بھی سکون اس کے نصیب میں نہیں ہے۔ ہمارے سماج نے اس چارپائی میں ابہام، اوہام، دشنام اور الزام کے یہ موٹے موٹے کھٹمل ڈال رکھے ہیں جو اس کا خون چوستے اور اسے بے کل کرتے رہیں گے۔ کردار کشی بدترین انتقام ہے۔ اس الزام کا شکارکسی کو منہ دکھانے کے قابل نہیں رہتا۔ مرد کی مجبوری یہ ہے کہ
مزید پڑھیے


’’بارگاہِ بری سرؔکارؒ میں اور متفرقاؔت ِ اسلام آباد!‘‘

منگل 22 اکتوبر 2019ء
اثر چوہان
معزز قارئین!۔ لاہور میں میرے والدین اور بڑی بیگم اختر بانو چوہان کی قبریں ہیں اور اسلام آباد میں چھوٹی بیگم نجمہ اثر چوہان کی ۔ اِس لحاظ سے مَیں سالہا سال سے لاہور میں حضرت داتا گنج بخش سیّد علی ہجویریؒ اور اسلام آباد میں سیّد شاہ عبداُللطیف کاظمی ، قادریؒ کی کفالت میں زندگی بسر کر رہا ہُوں ۔ تین روز پہلے مَیں نے اپنی بیٹی عاصمہ ، اُس کے شوہر معظم ریاض چودھری اور بیٹے علی امام کے ساتھ اسلام آباد میں سیکٹر "H-8" کے قبرستان میں نجمہ اثر چوہان کی قبر پر حاضری دِی تو،
مزید پڑھیے


بلوچستان یونیورسٹی۔ ہو کیارہاہے؟

منگل 22 اکتوبر 2019ء
محمد حسین ہنز ل
چند روز پہلے بھی میں نے اپنے ایک کالم میں ملک کے تعلیمی اداروں میں غیراخلاقی سرگرمیوں اور منشیات کے بڑھتے ہوئے رجحان کے بارے میں لکھاتھا۔آج پھر مکررعرض کرتاہوں کہ اس ملک کے ذمہ دار لوگ آخر اِن اداروں میں پڑھنے والوں کے مستقبل کے ساتھ کھلواڑ کرنے پر کیوںتلے ہوئے ہیں؟ کیا تعلیمی اداروں میں ملک کے کونے کونے سے آئے ہوئے بچے اور بچیاں اپنے والدین کی امانت نہیںہیں؟اگر یہ امانت ہے تو پھرسوال یہ بھی ہے کہ ان امانتوں میں خیانت کرنے والوں کے خلاف ریاست مستقل بنیادوں پر اقدامات اب بھی نہیں تو کب اٹھائے
مزید پڑھیے


نسل پرستی اور قوم پرستی کا فرق

منگل 22 اکتوبر 2019ء
ظہور دھریجہ
کچھ لوگ نسل پرستی اور قوم پرستی کو ایک دوسرے کے ساتھ گڈمڈ کر دیتے ہیں حالانکہ نسل الگ چیز ہے اور قوم الگ، نسل کا تعلق جینز سے ہے اور قوم کا تعلق دھرتی سے، مختلف قوموں کے لوگ جہاں جہاں گئے اُسی قوم کا حصہ بن گئے جبکہ نسلی طور پر وہ اپنا ناطہ اپنے سابقہ حسب و نسب سے جوڑتے ہیں، جیسا کہ جی ایم سید نسلی طور پر عرب ہیں جبکہ جغرافیہ کے حوالے سے وہ سندھی قوم پرست ٹھہرے، کچھ لوگ ایم کیو ایم کے الطاف حسین کو قوم پرست کا نام دیتے ہیں حالانکہ
مزید پڑھیے


عمران خان کی تقریر کا دنیا پر اثر

منگل 22 اکتوبر 2019ء
نو شی گیلا نی
گزشتہ دنوں انگلینڈ کے شاہی خاندان کی ہر دلعزیز شہزادی کیٹ مڈلٹن پاکستان میں تھیں اور پاکستان اس حوالے سے دْنیا بھر کی خبروں میں۔ شہزادی کیٹ اور شہزادہ ولیم کا یہ دورہ اس امر کی دلیل قرار دیا جا رہا تھا کہ پاکستان اب ایک محفوظ مْلک ہے اور سیّاحت کے لیے بہت موزوں۔ دہشت گردی بڑی حد تک ختم کی جا چکی ہے۔ عالمی سطح پر وطنِ عزیز کا یہ پْر امن تاثر اطمینان و عزت کا باعث بنا، ایک طویل عرصہ کے بعد پاکستان خیر کی خبروں کا حصّہ بنا۔ بظاہر یہ خیر سگالی دورہ تھا لیکن
مزید پڑھیے


بابری مسجد : استدلال بنام عقیدہ

منگل 22 اکتوبر 2019ء
افتخار گیلانی
6دسمبر 1992ء کو جب بھارت کے ایودھیا شہر میں بابری مسجد کو مسمار کیا جا رہا تھا، میں ان دنوں صحافتی کیریر کا آغاز کرکے بھارتی دارلحکومت دہلی میں ایک ٹرینی کے طورپر میڈیا کے ایک ادارہ کے ساتھ وابستہ تھا ۔مجھے یاد ہے کہ دن کے 11بجے تک رپورٹرز ویشو ہندپریشد اور بھارتیہ جنتا پارٹی کی طرف سے منعقدہ پروگرام کی خبریں بھیج رہے تھے ، پھر ایک دم سے ایودھیاسے خبروں کی ترسیل کا سلسلہ منقطع ہوگیا۔ رات گئے تک بس حکومتی ذرائع سے یہی خبر تھی کہ انتظامیہ مسجد کو بچانے کیلئے مستعد ہے اور خاصی تعداد
مزید پڑھیے


بڈھے بڈھے جرنیل اور کم سن مولانا

منگل 22 اکتوبر 2019ء
آصف محمود
ننھے منے مولانا بڈھے بڈھے جرنیلوں پر برس پڑے تو نوح ناروی یاد آئے کہ ’’ ابھی کم سن ہیں ُ‘‘ بگڑ گئے تو کیا ہوا، عمر ہی ایسی ہے۔ لیکن گنجینہِ معنی کا طلسم کھلا تو معلوم ہوا نشانے پر امجد شعیب تھے ۔ منظر لکھنوی نے کہا تھا: کم سنی کیا کم ہے ، اس پر قہر ہے شکی مزاج۔کم سن مولانا نے الزام بھی لگایا تو کتنا نامعتبر؟ ’’ اسرائیل کے ٹکڑوں پر پلنے والے‘‘۔اس ملک میں کسی بھی شریف آدمی پر کیچڑ اچھال دینا کتنا آسان ہے ،جسے سیاسی عصبیت حاصل نہیں ، اس کے
مزید پڑھیے


مولانا فضل الرحمن کا آزادی مارچ اور حکومتی رویہ

منگل 22 اکتوبر 2019ء
ڈاکٹر حسین پراچہ
برسوں پہلے مولانا فضل الرحمن طائف تشریف لائے تب میں وہیں تھا۔ مولانا کے احباب نے طائف کی بلند ترین چوٹی الھداء کے شیرٹن ہوٹل میں ان کے اعزاز میں عصرانے کا اہتمام کیا۔ عصرانے میں مولانا نے خطاب کیا اور فقیر نے بھی چند گزارشات پیش کیں۔ تب مولانا کی داڑھی کا غالب حصہ ابھی سیاہ تھا۔ مولانا اس وقت ابھی In the makingاور سیاسی رہگزر میں تھے پس از خطاب انہوں نے سرگوشی میں پوچھا کیوں بھئی خطاب کیسا تھا؟ میں نے عرض کیا مولانا! چھوٹے موٹے خطیب تو ہم بھی ہیں اس لئے ولی راولی می شناسد۔
مزید پڑھیے


کشمیر سے کشمیر تک

منگل 22 اکتوبر 2019ء
عبداللہ طارق سہیل
وزیر اعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر نے کہا ہے کہ ہم نے مسئلہ کشمیر حل کرنے کی کبھی سنجیدہ کوشش نہیں کی۔ وہ عاصمہ جہانگیر مرحومہ کی یاد میں سیمینار سے خطاب کر رہے تھے۔ سیمینار میں اعلیٰ عدلیہ کے ججوں‘ سینئر صحافیوں اور سیاسی رہنمائوں نے خطاب کیا اور عدلیہ کی آزادی‘ آئین کی بالادستی اور انسانی حقوق کے تحفظ کے لئے مرحومہ کو شاندار خراج عقیدت پیش کیا۔کانفرنس میں صحافیوں کے تحفظ کے عالمی ادارے کے مندوب سیٹو بٹلر بھی آئے تھے لیکن حکومت نے انہیں لاہور ایئر پورٹ پر ہی روک لیا اور پھر ملک بدر
مزید پڑھیے


اس درد کا علاج نہیں تیرے پاس بھی

منگل 22 اکتوبر 2019ء
اوریا مقبول جان
اخلاقیات اور شرم و حیا سے تہی‘ انفرادی ترقی اور مفادات کے تحفظ کا علمبردار اور کاروباری برتری کے پہیوں تلے شرم و حیائ، اخلاق و مروت‘ تہذیب و شائستگی اور بنیادی انسانی ہمدردی تک کو کچلنے والے سیکولر لبرل معاشرے میں کسی شریف اور باحیاء مرد یاعورت کا زندہ رہنا مشکل سے مشکل ترین ہوتا جا رہا ہے۔ کارپوریٹ سرمائے سے تخلیق کردہ اس سیکولر لبرل معاشرے کا سب سے بڑا ہتھیار میڈیا ہے جو اس کا ’’بھونپو‘‘ ہے۔ یہ میڈیا کسی کی عزت و تکریم میں اضافہ کرنے میں شاید کامیاب نہ ہو سکے لیکن کسی کو ذلیل
مزید پڑھیے


پتنگ بازی پر پابندی یقینی بنائی جائے

منگل 22 اکتوبر 2019ء
اداریہ
صوبائی دارالحکومت میں پولیس چہلم امام حسینؓ اور داتا علی ہجویری ؒ کے عرس کی سکیورٹی میں مصروف رہی تو پتنگ باز دل کھول پتنگ بازی کرتے رہے۔ ساندہ کے علاقے میں کٹی پتنگ کی ڈور پھرنے سے 25سالہ موٹر سائیکل سوار نوجوان جاں بحق ہو گیا۔ انتظامیہ نے پتنگ بازی پر پابندی عائد کر رکھی ہے۔ جس گھر کی چھت پر کوئی پتنگ اڑاتا پایا جائے اس کے خلاف ایف آئی آر درج کر دی جاتی ہے۔ اگر پتنگ اڑانے والے بچے ہوں تو ان کے والدین کے خلاف کارروائی کی جاتی ہے۔ لیکن اس کے باوجود کچھ لوگ
مزید پڑھیے


ایف اے ٹی ایف کی تجاویز!

منگل 22 اکتوبر 2019ء
اداریہ
فنانشنل ایکشن ٹاسک فورس نے تخریب کاروں کے خلاف ایکشن کی فعالیت کو ثابت کرنے کے لئے 10اقدامات تجویز کئے ہیں۔ پاکستان میں صرف گزشتہ 6ماہ کے دوران 5ہزار سے زائد بنک اکائونٹس کو بند کرنے کے علاوہ ان میں موجود رقوم منجمد کی جا چکی ہیں۔غیر ملکی زرمبادلہ کی نقل و حمل پرنظر رکھ کر منی لانڈرنگ میں ملوث افراد کے لئے سخت سزائیں تجویزکرنے کے لیے قومی اسمبلی نے فارن ایکسچینج ریگولیشنز میں ترمیم کا بل بھی منظور کیا ہے۔ یہاں تک کہ لشکر جھنگوی، جماعت الدعوۃ ،لشکر طیبہ، مولانا مسعود اظہر کے علاوہ پاکستان میں خیراتی ادارے
مزید پڑھیے


پاکستان میڈیکل کمشن آرڈیننس

منگل 22 اکتوبر 2019ء
اداریہ
صدر مملکت عارف علوی نے پاکستان میڈیکل اینڈ ڈینٹل کونسل کو تحلیل کر کے پاکستان میڈیکل کمشن کے نام سے نیا ادارہ قائم کرنے کا آرڈیننس جاری کر دیا ہے۔ پی ایم سی کو 9اراکین کی کمیٹی چلائے گی جس کا سربراہ صدرکہلائے گا۔ پاکستان میڈیکل کمشن شعبہ طب کے متعلق پالیسی اور ضابطوں کا نگران ہو گا۔ میڈیکل تعلیم کے لئے کم ازکم معیار کا تعین۔ تربیت، طب و دانتوں کے علاج کے لئے ادویات اور تعلیمی قابلیت کا تعین پی ایم سی کی ذمہ داری ہو گی۔ موصولہ اطلاعات کے مطابق پی ایم سی جن شعبوں پر بااختیار
مزید پڑھیے


کھیل ختم‘ پیسہ ہضم

منگل 22 اکتوبر 2019ء
ارشاد احمد عارف
مولانا فضل الرحمن کو یہ کریڈٹ تو جاتا ہے کہ انہوں نے پاکستانی ریاست اور سیاست کے بیانئے سے مسئلہ کشمیر‘ کرپشن اور احتساب کو بے دخل کر دیا۔ مسئلہ کشمیر کی جگہ مولانا کا آزادی مارچ اور دھرنا زیر بحث ہے اور کرپشن و احتساب کا ذکر صرف عمران خان کی تقریروں میں ملتا ہے‘ میڈیا پر لانگ مارچ اور دھرنے کا چرچا ہے۔ نجی محفلوں میں موضوع گفتگو اب سرینگر ‘ صورہ اور شوپیاں کی صورت حال نہیں ‘ اسلام آباد میں لانگ مارچ روکنے کی تیاریاں اور مسلم لیگ ن و پیپلز پارٹی کی نیمے دروں‘ نیمے
مزید پڑھیے


’’آزادی مارؔچ میں ، قائداعظمؒ زندہؔ باد کا نعرہ؟‘‘

پیر 21 اکتوبر 2019ء
اثر چوہان
معزز قارئین!۔ مجھے نہیں معلوم کہ امیر جمعیت عُلماء اسلام (فضل اُلرحمن گروپ) کی قیادت میں( ضرب اُلمِثل کے مطابق) آزادیؔ مارچ کا اونٹؔ کس کروٹ بیٹھے گا؟۔ وضعداری کے تقاضے کے تحت فضل اُلرحمن صاحب نے اپنی جمعیت کے دوسرے لیڈروں عبداُلغفور حیدری، سینیٹر طلحہ محمود اور امجد خان صاحبان کے ہمراہ پاکستان مسلم لیگ ( ق) کے صدر چودھری شجاعت حسین اور سپیکر پنجاب اسمبلی چودھری پرویز الٰہی سے ملاقات میں فضل اُلرحمن صاحب نے اپنی یہ شرط دُہرائی ہے کہ ’’ (عمران خان کی ) حکومت پہلے مستعفی ہو ، ہم پھر مذاکرات کریں گے!‘‘۔ 20 اکتوبر
مزید پڑھیے






کالم نگار

اداریہ
اداریہ









سجاد میر
شہر آشوب

مستنصر حسین تارڑ
ہزار داستان

مجاہد بریلوی
شہر ناپرساں


مبشر لقمان
کھرا سچ

عبداللہ طارق سہیل
وغیرہ وغیرہ


بشریٰ رحمان
چادر چاردیواری اور چاندنی

نو شی گیلا نی
کا لم کہا نی


افتخار گیلانی
مکتوب دہلی

خاور نعیم ہاشمی
پردہ اٹھتا ہے


رضا رومی
رومی نامہ

انجم نیاز
یادداشت از امریکا



خاور گھمن
گھمن گھیریاں


سعید خا ور
حر ف درما ں

راوٗ خالد
رولا رپہ



اشرف شریف
شہر نامہ

ایچ اقبال
ایچ اقبال


قدسیہ ممتاز
حرف تازہ




سعود عثمانی
دل سے دل تک

اثر چوہان
سیاست نامہ

عامر متین
عامر متین

ارشاد محمود
بات یہ ہے


ناصرخان
فرنٹ لائن

عدنان عادل
امروزوفردا

ذوالفقار چودھری
تیسری آنکھ

شاہین صہبائی
چلتے چلتے



سعید خاور
حرفِ درماں

رعایت اللہ فاروقی
گفتار و پندار

یوسف سراج
نقش قدم


عمر قاضی
لالہ صحرائ

عبدالرفع رسول
مکتوب سری نگر

احمد اعجاز
کہانی کی کہانی

خالد ایچ لودھی
دل کی باتیں

رحمت علی رازی
درون پردہ

وسی بابا
باتاں


راحیل اظہر
غبارِخاطر

محمد عامر رانا
اقلیم در اقلیم