کالم



آج کے کالم 


  


کالم آرکیو



کرونا چیلنج: بھارتی صوبہ کیرالا سے استفادہ کی ضرورت

منگل 24 مارچ 2020ء
افتخار گیلانی
پچھلے دنوں جب بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی نے پہل کرکے کرونا وائرس سے نمٹنے کیلئے جنوبی ایشیائی تعاون تنظیم سارک کے رکن ممالک کے سربراہان کی ویڈیو کانفرنس بلانے کی تجویز دی، ذرائع کے مطابق نئی دہلی کے مقتدر حلقوں اور کھٹمنڈو میں مقیم تنظیم کے سیکرٹریٹ کے افسران نے مشورہ دیا تھاکہ بھارت کے جنوبی صوبہ کیرالا کے وزیر اعلیٰ پینایاری ویجایان کو بھی اس میں شامل کیا جائے، تاکہ رکن ممالک ان کے تجربات سے استفادہ کرسکیں۔ چونکہ اس کانفرنس کا انعقاد متعدی مرض کا علاج ڈھونڈنے یا کوئی مشترکہ لائحہ عمل طے کرنے سے زیادہ مودی
مزید پڑھیے


فیصلہ تو کرنا ہے

منگل 24 مارچ 2020ء
ہارون الرشید
جو اقوام اپنے فیصلے خود صادر نہیں کرتیں، وہ خود کو حالات اور دوسروں کے رحم و کرم پر چھوڑ دیتی ہیں۔ کرونا پہلی افتاد ہے اور نہ آخری۔اگرچہ بعض اعتبار سے ایسی سنگین کہ تاریخ میں اس کی کوئی مثال نہیں۔طاعون، انفلوئنزااور یورپی ہیضے کے برعکس ہلاکتوں کا تناسب کم ہے مگر غیر معمولی سرعت سے پھیلنے والی۔ یہی اصل مسئلہ ہے۔ دنیا کے امیر ترین ممالک کے پاس بھی کافی سازو سامان اور موزوں ادویات مہیا نہیں۔ برطانیہ کے سیکرٹری ہیلتھ نے کل بہت بے بسی اور بے چارگی کا اظہار کیا۔ باقی دنیا کا عالم
مزید پڑھیے


حریت رہنما یاسین ملک کی بگڑتی صحت

منگل 24 مارچ 2020ء
اداریہ
پاکستانی حکومت نے تہاڑ جیل میں قید کشمیری رہنما محمد یاسین ملک کی شدید خراب صحت پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔ کشمیر کے کئی رہنما 5 اگست2019ء سے گھروں میں نظربند ہیں یا پھر باقاعدہ ان پر مقدمات درج کرکے انہیں عقوبت خانوں میں قید کر رکھا گیاہے۔ یاسین ملک کی تنظیم پر بھارتی حکومت نے مارچ 2019ء میں پابندی عائد کی۔ بعد ازاں انہیں ناکردہ جرائم میں گرفتار کرکے تہاڑ جیل کے ڈیتھ سیل میں رکھ کر بہیمانہ تشدد کیا جا رہا ہے۔ اس وقت یاسین ملک موت اور زندگی کے دوراہے پر کھڑے ہیں، انہوں نے اپنی
مزید پڑھیے


افواہ سازوں کا محاسبہ ضروری

منگل 24 مارچ 2020ء
اداریہ
روزنامہ 92نیوز کی رپورٹ کے مطابق سوشل میڈیا اور دیگر غیر سرکاری پلیٹ فارمز پر کرونا وائرس کے حوالے سے افواہوں کے سدباب اور انہیں پھیلانے والوں کے خلاف کارروائی کے لئے انکوائری شروع کر دی گئی ہے۔ جس کے لئے ٹاپ خفیہ اداروں کی معاونت حاصل کر لی گئی ہے‘ اسی طرح قرنطینہ سینٹر سے بھاگے ہوئے افراد کو ٹریک کرنے کے لئے بھی ان اداروں سے مدد لی جا رہی ہے۔ اس میں کوئی شبہ نہیں کہ کرونا وائرس کے حوالے سے سوشل میڈیا ‘نیٹ‘ موبائل‘ واٹس ایپ اور دوسری ایپلی کیشنز کے ذریعے نت نئی افواہیں پھیلا
مزید پڑھیے


جو محدود‘ وہ محفوظ

منگل 24 مارچ 2020ء
اداریہ
سندھ کے بعد پنجاب نے بھی دو ہفتوں کیلئے لاک ڈائون کا فیصلہ کیا ہے۔کاش کہ وزیر اعظم خود لاک ڈائون کا فیصلہ کرتے تاہم اس سے ایک روز قبل وزیر اعظم عمران خان نے قوم سے خطاب میں عوام کو کرونا وائرس سے محفوظ رہنے کے لئے احتیاطی تدابیر پر عمل کی ہدایت کی ۔ وزیر اعظم نے کہا کہ جو اپنی نقل و حرکت کو محدود کرے گا وہی محفوظ ہو گا۔ انہوں نے لوگوں سے اپیل کی ہے کہ وہ گھروں میں رہیں۔ پاکستان میں کرونا وائرس کے متاثرین کی تعداد بڑھتی جا رہی ہے۔ دو ہفتے قبل
مزید پڑھیے


کرونا وائرس‘ مودی وائرس اور ہم

منگل 24 مارچ 2020ء
ارشاد احمد عارف
پنجاب میں لاک ڈائون کے اعلان کے بعد صرف اسلام آباد کا وفاقی ایریا باقی ہے جہاں عملاً کاروباری سرگرمیاں بند ہیں‘ دفعہ 144نافذ ‘فوج موجود اور آمدو رفت محدود مگر حکومت نے باضابطہ لاک ڈائون کا اعلان نہیں کیا‘ وزیر اعظم عمران خان کی طرف سے لاک ڈائون نہ کرنے کی دلیل کو پیپلز پارٹی کے وزیر اعلیٰ مراد علی شاہ ‘مسلم لیگ کے راجہ فاروق حیدر نے مانا نہ تحریک انصاف کے وزراء اعلیٰ سردار عثمان خان بزدار اور محمود خان قائل ہوئے‘ وقت اور حالات کے تقاضوں کا درست ادراک نہ کرنے والے لیڈر کو اپنے پیروکاروں
مزید پڑھیے


ایران کمال کررہاہے

منگل 24 مارچ 2020ء
محمد حسین ہنز ل
ایران ایک قابل رحم ملک ضرورہے تاہم اسے ایک قابلِ رشک ملک کہنا بھی مبالغہ نہیں ہوگا۔ ایران قابل ِ رحم اس لئے ہے کہ کرونا وائرس کی حالیہ وبا کے متاثرین کی فہرست میں یہ عالمی سطح پر تیسرا اور مسلم ملکوں میں پہلا ملک ہے جہاں اس وبا سے سب سے زیادہ لوگ متاثر ہوئے ہیں ۔یہ سطور لکھتے وقت ایران میں اب تک ساڑھے اکیس ہزار سے زیادہ افراد میں کرونا وائرس کی تشخیص ہوئی ہے جبکہ سترہ سو کے قریب اموات واقع ہوئے ہیں۔اس ملک کومیں قابل ِ رشک اس لئے سمجھتاہوں کہ ایک طرف یہ
مزید پڑھیے


خواجہ محمدزکریا کی 80 ویں سالگرہ

منگل 24 مارچ 2020ء
سعد الله شاہ
کیا سروکار ہمیں رونق بازار کے ساتھ ہم الگ بیٹھے ہیں دست ہنر آثار کے ساتھ ایک احساس وفا کی طرح بے قیمت ہیں ہم کو پرکھے نہ کوئی درھم و دینار کے ساتھ میرے پسندیدہ فکشن رائٹر جمیل احمد عدیل نے ڈاکٹر خواجہ محمد زکریا کے حوالے سے پوسٹ لگائی کہ 80برس کے ہو چکے مجھے مندرجہ بالا اشعار لکھنا پڑے کہ ’پیدا کہاں ہیں ایسے پراگندہ طبع لوگ افسوس تجھ کو میر سے صحبت نہیں رہی۔ مگر ہمیں تو ڈاکٹر خواجہ محمد زکریا سے محبت رہی اور خوب رہی۔ آج بھی ان کے چہرے پر وہی معصومیت اور خوبصورتی ہے جو چالیس
مزید پڑھیے


خواجہ فرید چیئر کی ضرورت

منگل 24 مارچ 2020ء
ظہور دھریجہ
اقبالیات کی طرح سرائیکی وسیب میں فریدیات کو بھی علمی درجہ حاصل ہے، بہاؤ الدین زکریا یونیورسٹی ملتان اور اسلامیہ یونیورسٹی بہاولپور کے سرائیکی شعبہ جات میں خواجہ فرید کو پڑھایا جا رہا ہے اور ایم اے ،ایم فل اور پی ایچ ڈی سرائیکی میں فریدیات کا الگ پیپر موجود ہے ۔ ہر دو یونیورسٹیوں میں عرصہ تقریباً 15 سال سے خواجہ فرید چیئرز منظور ہیں مگر آج تک وہ فنکشنل نہیں ہو سکیں ۔ پہلی مرتبہ بہاؤ الدین زکریا یونیورسٹی میں خواجہ فرید چیئر کے لئے اکیسویں گریڈ کی ایک پوسٹ اخبارات میں مشتہر کی گئی ہے ، مگر
مزید پڑھیے


کرونا اور انفعالی مدافعت

پیر 23 مارچ 2020ء
سجاد میر
ابھی ابھی اطلاع آئی ہے کہ وزیر اعظم عمران خاں چند منٹ کے بعد قوم سے خطاب کیا اور ایسا وہ اکثر کرتے رہیں گے۔ خود بھی روز کرونا پر بریفنگ لیا کریں گے تاکہ باخبر رہ کر درست فیصلے کر سکیں۔ حکومت پنجاب نے فوج طلب کر لی ہے۔ زیادہ سے زیادہ لاک ڈائون ہو سکتا ہے۔ وقت اتنی تیزی سے گزر رہا ہے کہ شہباز شریف بھی وطن واپس آ چکے ہیں حالانکہ بڑے بڑے ماہرین اس کی توقع نہیں کر رہے تھے۔ سیاست پیچھے رہ گئی ہے۔ آسمانوں سے ایسی آفت نازل ہوئی ہے کہ دنیا کے
مزید پڑھیے


کالی موت سے کرونا تک

پیر 23 مارچ 2020ء
اشرف شریف
اُس وقت کی دستاویزات بتاتی ہیں کہ چودھویں صدی میں وبا پھوٹی‘ معلوم نہیں وبا کہاں سے شروع ہوئی مگر یہ قدیم سلک روڈ کے ساتھ ساتھ سفر کرتی 1343ء میں کریمیا پہنچ گئی‘ چار سال بعد1347ء میں یہ وبا بحری جہازوں کے مسافروں کے ساتھ سسلی کی بندرگاہ پر آ گئی‘ الیگزنڈریا میں بھی اس نے پنجے گاڑنے شروع کر دیے۔ سسلی سے وینس پھر پیسا‘ فلورنس اور روم۔ اس دوران 1348ء میں متاثرہ افراد کا پہلا جہاز مار سیلیز آیا۔ یہاں سے دریائی اور زمینی شاہراہوں کے ساتھ ساتھ وباپھیلنے لگی۔ پیرس اس کی لپیٹ میں آ
مزید پڑھیے


کرونا سے کرونا تک

پیر 23 مارچ 2020ء
عبداللہ طارق سہیل
مشکل گھڑی ہے اور مشکل بڑھتی جا رہی ہے۔ لوگ ڈرے ہوئے ہیں اور ڈر پھیلتا جا رہا ہے۔ تفتان کے راستے آنے والے کرونا وائرس کے جھکڑ اب طوفان بنتے جا رہے ہیں۔حکومت نے اس عذاب با آفت سے نمٹنے کے لئے اور عوام کے بچائو کے لئے کئی ٹھوس اور گراں قدر فیصلے کئے ہیں جن کی تعریف نہ کرنا زیادتی ہو گی۔ خلاصہ ان اقدامات کا یہ ہے کہ گرمیوں کا انتظار کیا جائے۔ کرونا خود ہی ختم یا کمزور ہو جائے گا۔ دیکھا جائے تو یہ نہایت معقول اور دولتمندانہ پالیسی ہے اور اس کا تجربہ
مزید پڑھیے


کرونا: روس میں کیوں نہ پھیل سکا؟

پیر 23 مارچ 2020ء
آصف محمود
کیا آپ نے غور کیا کرونا جس نے ساری دنیا کو سراسیمگی میں مبتلا کر رکھا ہے ، روس میں کیوں نہ پھیل سکا۔ روس بھی تو چین کا پڑوسی ہے اور پڑوسی بھی ایسا کہ مشترکہ سرحد چار ہزار دو سو نو کلومیٹر پر پھیلی ہے۔یہ دنیا کی چھٹی طویل ترین سرحد ہے۔ یہ ایک دلچسپ کہانی ہے اور اس میں ہمارے لیے عبرت اور حکمت ، دونوں کا سامان موجود ہے۔ 31 دسمبر کو چین میں نمونیے کے کچھ ایسے کیس سامنے آئے جو عام نمونیا سے مختلف تھے۔ آپ چین کا رد عمل دیکھیے ، اسی شام سائنسدانوں
مزید پڑھیے


سرِ لا مکاں سے طلب ہوئی---

پیر 23 مارچ 2020ء
ڈا کٹر طا ہر رضا بخاری
غمگسار چچا اور وفا شعار رفیقہ حیات کے دنیا سے اُٹھ جانے کے بعد ،مکہ والوں کے تیور یک لخت بدل گئے ، شائستگی اور احترام کی بجائے بے مروتی اور سنگدلی غالب آگئی ،مکہ میں اسلام کے شجر طیبہ کے بار آور ہونے کے امکانات مشکل نظر آئے، توحضورﷺ نئے اُفق دریافت فرمانے کی طرف متو ّجہ ہوئے ،جس کے لیے فوری طور پر طائف کا سفر اختیار فرمایا ، طائف مکہ سے 120میل دور ایک خوشگوار اور پُر فضا پہاڑی مقام، جہاں کی آبادی خوشحال اور آسودہ حال تھی ، یہ علاقہ بنو ثقیف کی ملکیت تھا ،جن
مزید پڑھیے


منصوبہ بندی

پیر 23 مارچ 2020ء
ہارون الرشید
ایک موزوں ترین منصوبے پہ عمل درآمد میں بھی غلطیاں ہو سکتی ہیں مگر ایسے خوفناک بحران میں کنفیوژن اور بے عملی سب سے بڑی غلطی ہوگی۔ ایسی تیزی سے وبا پھیلی ہے کہ ساری دنیا گڑبڑا گئی۔ پاکستان کا تو کیا رونا کہ سول ادارے تباہ حال ہیں۔ لاہور میں ایک صاحب نے چھ ہزار روپے لے کر کورونا کے مریض کو جانے دیا۔جہاں مہیا تھے، وہاں بھی اکثریت نے ماسک خریدنے سے گریز کیا۔ یہ نسبتاً تیزی سے بنائے جا سکتے تھے، گھروں میں بھی۔ ڈاکٹروں کے لیے موزوں لباس مہیا نہ تھا۔ وینٹی لیٹرز کی تعداد کم
مزید پڑھیے






کالم نگار

اداریہ
اداریہ





سجاد میر
شہر آشوب




مجاہد بریلوی
شہر ناپرساں

مبشر لقمان
کھرا سچ

عبداللہ طارق سہیل
وغیرہ وغیرہ



افتخار گیلانی
مکتوب دہلی

خاور نعیم ہاشمی
پردہ اٹھتا ہے

رضا رومی
رومی نامہ




سعید خا ور
حر ف درما ں


راوٗ خالد
رولا رپہ



اشرف شریف
شہر نامہ





ارشاد محمود
بات یہ ہے

عا بد قر یشی
تجا ہل عا دلا نہ



ناصرخان
فرنٹ لائن

عدنان عادل
امروزوفردا

عابد قریشی
تجاہل عادلانہ

ذوالفقار چودھری
تیسری آنکھ

شاہین صہبائی
چلتے چلتے


سعید خاور
حرفِ درماں


مظفر بخاری
گستاخی معاف

یوسف سراج
نقش قدم


عمر قاضی
لالہ صحرائ

عبدالرفع رسول
مکتوب سری نگر

احمد اعجاز
دروا‍‌زہ

خالد ایچ لودھی
دل کی باتیں

وسی بابا
باتاں


محمد عامر رانا
اقلیم در اقلیم