کالم



آج کے کالم 


  


کالم آرکیو



کابینہ کے اہم فیصلوں پر عملدرآمد ضروری

منگل 15 اکتوبر 2019ء
اداریہ
اسلام آباد سے روزنامہ 92 نیوز کی رپورٹ کے مظابق بعض وزارتوں اور ڈویژنوں نے گزشتہ ایک سال کے دوران وفاقی کابینہ کی طرف سے کئے جانے والے اہم ترین فیصلوں پر عملدرآمد ناقابل عمل قرار دیا ہے جس سے وزیراعظم عمران خان کی اربوں روپے کی بچت مہم اور قوم سے کئے گئے وعدوں کی پاسداری کی کوششیں متاثر ہوئی ہیں۔ یہ بات قابل ذکر ہے کہ پی ٹی آئی نے انتخابات کے دوران عوام سے وعدہ کیا تھا کہ ملک میں بچت مہم شروع کی جائے گی اور تمام سرکاری اداروں کو اس کا پابند بنایا جائے گا۔
مزید پڑھیے


وزیر اعظم کا مصالحتی مشن

منگل 15 اکتوبر 2019ء
اداریہ
وزیر اعظم عمران خان اور ایرانی قیادت کے درمیان ملاقات کا اعلامیہ بتاتا ہے کہ خلیج میںامن و سلامتی کے فروغ کے لئے پاکستانی کوشش کی پذیرائی جاری ہے۔ وزیر اعظم عمران خان نے ایران کے سپریم لیڈر آیت اللہ خامنہ ای اور صدر حسن روحانی سے ایران سعودیہ کشیدگی ہی نہیں پاک ایران تجارتی و سیاسی تعاون پر بھی تفصیل سے بات کی۔ اعلامیہ کے مطابق وزیر اعظم نے ایرانی قیادت سے دو طرفہ تعلقات کی تاریخی اہمیت اور تعاون پر بات کی۔ وزیر اعظم نے کشمیریوں کی حمایت پر ایرانی سپریم لیڈر کا شکریہ ادا کیا اور کہا
مزید پڑھیے


مسلم لیگ۔ میں نئیں جانا کھیڑیاں دے نال

منگل 15 اکتوبر 2019ء
ارشاد احمد عارف
مولانا فضل الرحمن کی احتجاجی تحریک حکومت اور اصل ہدف یعنی عمران خان کے حقیقی پشت پناہوں پر کتنی اثر انداز ہوتی ہے؟ درست اندازہ 27اکتوبر کے اردگرد ہو گا‘ ابھی لبوں اور چائے کے کپ کے درمیان خاصہ فاصلہ ہے۔ مسلم (ن) البتہ منفی اثرات سے محفوظ نہیں رہ سکی۔ اجلاس پر اجلاس ہو رہے ہیں اور نامہ و پیام جاری ہے مگر نتیجہ؟ کہ حرکت تیز تر ہے اور سفر آہستہ آہستہ۔ ویسے تو پورا ملک ہی منیر نیازی کے بقول آسیب کی زد میں ہے کیا حکومت اور کیا اپوزیشن ؟ہر شعبے میں حرکت تیز تر ہے
مزید پڑھیے


کہ جانے کون کہاں راستہ بدل جائے

پیر 14 اکتوبر 2019ء
سجاد میر
جس طرح لوگ پوچھتے ہیں فضل الرحمن دھرنا دینے کیوں آ رہے ہیں‘ اس طرح یہ سوال بھی اٹھایا جاتا ہے کہ عمران خاں ایران اور سعودی عرب کیا لینے جا رہے ہیں۔ ہے کسی کے پاس کوئی جواب ۔کیا سچ مچ ہم سمجھتے ہیں کہ پاکستان عرب و عجم کے درمیان بنیادی کردار ادا کر سکتا ہے۔ ماضی میں تو یہ لوگ ‘دونوں ملک ہی‘ ٹھینگا دکھا دیا کرتے تھے‘ کسی سفارتی مصلحت کا مظاہرہ تک نہ کرتے تھے۔ کیا اب حالات بدل چکے ہیں یا اس کی آڑ میں کچھ اور معاملہ ہے۔ چین نے ایران میں ایک
مزید پڑھیے


باندھ کر کیسے مذاکرات؟

پیر 14 اکتوبر 2019ء
عا رف نظا می
طویل عرصے کے بعد مسلم لیگ (ن) کے’ سب کچھ ‘میاں نوازشریف کو میڈیا سے مختصر انٹرایکشن کرنے کا موقع ملا جو حکومتی بزر جمہروں نے بلا واسطہ طور پر خود فراہم کیا ۔مسلم لیگ (ن) کے رہبر میڈیا اور اپنے سیاسی حواریوں سے دور کوٹ لکھپت جیل کی ایک کوٹھڑی میں بند ’پاناماگیٹ ‘ کے ہاتھوں نااہل ہو کر اقامہ کیس میں طویل قید کاٹ رہے ہیں لیکن لگتا ہے کہ انتقامی ذہنیت کے حامل حکومتی اہلکار اس پر بھی راضی نہیں ، اس وقت تو ان کے اعصاب پر مولانا فضل الرحمن کا آزادی مارچ اور اسلام آباد
مزید پڑھیے


’’یادگاری لوحِ مفتی محموؔد کو ، وزیراعظم ہائوس سے ؔاُکھاڑ یں !‘‘

پیر 14 اکتوبر 2019ء
اثر چوہان
معزز قارئین!۔ آج 14 اکتوبر کو امیر جمعیت عُلماء اسلام ( فضل اُلرحمن گروپ )کے والدِ مرحوم مفتی محمود صاحب کی 39 ویں برسی ہے ۔ مجھے نہیں معلوم ؟ کہ ’’ مفتی صاحب کے وُرثا ء ، اُن کی برسی کو کس طرح منائیں گے؟لیکن، پرانی نسل کو یاد دِلانے اور نئی نسل کو آگاہ کرنے کے لئے ، تحریک ِ پاکستان میں مفتی محمود کے کردار کو واضح کرنا ضروری ہے ۔ انگریزوں اور ہندوئوں نے تو، قیام پاکستان کی مخالفت کی ہی تھی لیکن، ہندوئوں کی مُتعصب جماعت ’’ انڈین نیشنل کانگریس‘‘ کے باپو ؔ ۔
مزید پڑھیے


مجھے یقین ہے سردی میں مارے جائو گے

پیر 14 اکتوبر 2019ء
اشرف شریف
سردی اترتی ہے‘ جانے آسمان کی کھڑکیوں سے کون یخ ہوائوں کو زمین زادوں کے گھر بھیج دیتا ہے۔ سردی اترتی ہے‘ تو کئی دل عشق کی گرمی سے دہکنے لگتے ہیں اور کچھ آنکھیںدہلیز پر گلیشئر ہو جاتی ہیں۔ سردی اترتی ہے تو شہر میں گرم ملبوسات کی مہنگی دکانوں پر رش بڑھ جاتا ہے۔ سردی اترتی ہے تو کئی بے لباس جسموں کو اترن کی آس آ گھیرتی ہے۔ اس بار سردی اترے گی تو ہو سکتا ہے اسلام آباد میں پارلیمنٹ کے سامنے کوئی دھرنادیئے بیٹھا ہو۔ قالین سے آراستہ فرش‘ کھڑکیوں سے جھانکتے گلاب‘ سالویا اور گل
مزید پڑھیے


مولانا فضل الرحمن کی خدمت میں

پیر 14 اکتوبر 2019ء
آصف محمود
مولانا فضل الرحمن کے آزادی مارچ کے بارے میں بہت سوچا لیکن ڈور کا کوئی سرا ہاتھ نہیں آیا۔ سوچا مولانا ہی کی خدمت میں چند سوالات رکھے جائیں ، وہ بلاشبہ پاکستانی سیاست کے جہاندیدہ اور قابل احترام بزرگ ہیں ، رہنمائی فرما دیں تو شاید یہ الجھن دور ہو جائے۔ پہلا سوال یہ ہے کہ اس احتجاج کا مقصد کیا ہے؟احتجاج بلاشبہ مولانا کا حق ہے لیکن کیا وہ محض یہ ثابت کرنے تشریف لا رہے ہیں کہ یہ میرا حق ہے یا ان کے ہمراہ کوئی پالیسی بھی ہے جو انہیں کسی منزل مقصود تک پہنچائے
مزید پڑھیے


ترکی کا بفرزون ایڈونچر

پیر 14 اکتوبر 2019ء
عبداللہ طارق سہیل
غالباً آٹھ نو ماہ پہلے اس کالم میں لکھا گیا تھا کہ امریکہ شام میں کرد علاقے سے جانے کا سوچ رہا ہے۔ اگر ایسا ہوا تو ترک فوج اس علاقے میں گھس آئے گی اور اب جبکہ امریکی دستے کرد علاقے سے نکلے‘ ترک فوج داخل ہو گئی اور دو تین روز کی فوجی کارروائی کے بعد اس نے اپنی سرحد کے ساتھ ساتھ پوری لمبائی میں 30کلو میٹر چوڑی پٹی پر قبضہ کر لیا ہے‘ ترکی کا اعلان تو یہ ہے کہ وہ اس علاقے میں ان 35,30لاکھ شامی باشندوں کو بسائے گا جو چھ سات سال کی
مزید پڑھیے


برصغیر کا… ’’لنگر سسٹم‘‘

پیر 14 اکتوبر 2019ء
ڈا کٹر طا ہر رضا بخاری
بابُ الاسلام سندھ سے محمد بن قاسم کی آمد اور مسلم سپین پر طارق بن زیاد کی یلغار ایک ہی وقت میں ہوئی ۔ اُندلس میں آٹھ سو سال تک مسلمان… حکمران رہے ،مگر وہاں سے جب مسلمانوں کا اقتدار ختم ہوا ، تو اسلام اور مسلمانوں کو ہمیشہ ہمیشہ کے لیے دیس نکالا دے دیا گیا ۔ یورپ کے مستشرق بھی اس پر حیرت کا اظہار کرچکے ہیںکہ سپین میں بھی مسلمانوں پر زوال آیا او رہندوستان میں بھی ، لیکن ہندوستان کا سیاسی زوال ، مسلمانوں کے دینی نظام کو تباہ کیوں نہ کرسکا…؟ برطانیہ کے ایک معروف
مزید پڑھیے


شام میں ترکی کا فوجی آپریشن

پیر 14 اکتوبر 2019ء
افتخار گیلانی
پچھلے ہفتے بدھ کی رات کو ترکی کے دارالحکومت انقرہ کی فضائیں جنگی طیاروں کی گھن گرج سے گونج رہی تھی ۔ معلوم ہوا کہ ترک افواج نے دریائے فرات کے مشرق میں شام کے شمالی علاقوں میں کرد عسکری ٹھکانوں پر آپریشن شروع کر دیا ہے۔ امریکی نیشنل سیکورٹی انتظامیہ کے ایک خفیہ ڈاکومینٹ کے افشاء ہونے کے بعد یہ تقریباً طے تھا کہ ترکی اس علاقے کو محفوظ بنانے کیلئے کوئی سخت اور راست قدم اٹھانے والا ہے۔ عالم اسلام کے کئی مسائل میں کردوں کا المیہ بھی پچھلے سوبر سوں سے کسی تصفیہ کا منتظر ہے۔
مزید پڑھیے


جو اماں ملی تو کہاں ملی

پیر 14 اکتوبر 2019ء
اوریا مقبول جان
تمغہ امتیاز ہے اس مغرب کے لئے جس نے بالآخر جاوید احمد غامدی کو پناہ دے دی اور ڈوب مرنے کا مقام ہے اس پاکستان کیلئے جہاں انسان اپنی مرضی سے بول بھی نہیں سکتا۔میرے ملک کو جس نے گالی دینا ہو، برا بھلا کہنا ہو، دنیا کے سامنے یہ بتانا ہو کہ یہ جائے امن نہیں ہے، اسے گلا پھاڑ کر یہ سب کچھ کہنے، لکھنے اور چھاپنے کی آزادی امریکہ پر یورپ میں فورا میسر آجاتی ہے۔ آپ دہائیوں وہاں بیٹھ کر نفرت کا پرچار کریں،آپ کے اشارے پر لوگ بندوق لے کر سڑکوں پر نکل آئیں،
مزید پڑھیے


نیب لاہور کی تاریخ ساز ریکوری

پیر 14 اکتوبر 2019ء
اداریہ
قومی احتساب بیورو (نیب) لاہور کے ڈائریکٹر جنرل شہزاد سلیم کی سربراہی میں نیب لاہور نے اکتوبر 2017ء سے تاحال اڑھائی سال کے دوران کرپشن کے مختلف مقدمات سے ایک کھرب 6ارب روپے کی ریکوری کی گئی جو کہ لاہور بیورو کی 17سالہ تاریخ میں ایک نیا ریکارڈ ہے۔ جاری کردہ رپورٹ کے مطابق مجموعی ریکوری میں 6ارب 42کروڑ روپے سے زائد رقم پلی بارگیننگ کے ذریعے ریکور کی گئی۔ اس میں شبہ نہیں کہ قومی احتساب بیورو بڑی تندہی کے ساتھ ’’احتساب سب کے لئے‘‘ کی پالیسی کے تحت اپنے فرائض انجام دے رہا ہے اور موجودہ حکومت کے
مزید پڑھیے


ترک صدر کا بھارت سے کرفیو اٹھانے کا مطالبہ

پیر 14 اکتوبر 2019ء
اداریہ
استنبول میں تیسری سپیکر کانفرنس کے شرکاء کے اعزاز میں استقبالیے کے موقع پر ترک صدر سے سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر کی ملاقات ہوئی۔ طیب اردوان نے کہا کہ ہم مسئلہ کشمیر کے حل تک پاکستان کی حمایت جاری رکھیں گے۔ ترکی اور پاکستان برادر اسلامی ملک ہیں جو ایک دوسرے کے دکھ سکھ میں ساتھ کھڑے ہوتے ہیں۔ ترکی پہلے ہی پاکستان کی مسئلہ کشمیر پر پُرخلوص حمایت جاری رکھے ہوئے ہے۔ ترک صدر متعدد مرتبہ مسئلہ کشمیر پر ثالثی کی پیشکش بھی کر چکے ہیں لیکن بھارت ہٹ دھرمی برقرار رکھے ہوئے ہے۔ 5 اگست 2019ء کو
مزید پڑھیے


اپوزیشن جماعتوں کی حکومت مخالف تحریک

پیر 14 اکتوبر 2019ء
اداریہ
شہباز شریف کی زیر صدارت مسلم لیگ ن کے ہونے والے اجلاس میں میاں نواز شریف کی خواہش کے مطابق حکومت ہٹانے کی تحریک پر رضا مندی کا اعلان کیا گیا ہے۔ قبل ازیں شہباز شریف اور ان کے حامی ن لیگی رہنما تحریک اور دھرنے کی مخالفت کرتے رہے ہیں۔ مولانا فضل الرحمن نے مسلم لیگ ن کے اس اعلان پر اظہار مسرت کیا اور فرمایا کہ تحریک روکنے کے لئے فوج نے ان سے رابطہ کیا تو ان کا رویہ منفی نہیں ہو گا تاہم انہیں امید ہے کہ فوج سیاسی معاملات میں مداخلت نہیں کرے گی۔ جمعیت
مزید پڑھیے






کالم نگار

اداریہ
اداریہ









سجاد میر
شہر آشوب

مستنصر حسین تارڑ
ہزار داستان

مجاہد بریلوی
شہر ناپرساں


مبشر لقمان
کھرا سچ

عبداللہ طارق سہیل
وغیرہ وغیرہ


بشریٰ رحمان
چادر چاردیواری اور چاندنی

نو شی گیلا نی
کا لم کہا نی


افتخار گیلانی
مکتوب دہلی

خاور نعیم ہاشمی
پردہ اٹھتا ہے


رضا رومی
رومی نامہ

انجم نیاز
یادداشت از امریکا



خاور گھمن
گھمن گھیریاں


سعید خا ور
حر ف درما ں

راوٗ خالد
رولا رپہ



اشرف شریف
شہر نامہ

ایچ اقبال
ایچ اقبال


قدسیہ ممتاز
حرف تازہ




سعود عثمانی
دل سے دل تک

اثر چوہان
سیاست نامہ

عامر متین
عامر متین

ارشاد محمود
بات یہ ہے


ناصرخان
فرنٹ لائن

عدنان عادل
امروزوفردا

ذوالفقار چودھری
تیسری آنکھ

شاہین صہبائی
چلتے چلتے



سعید خاور
حرفِ درماں

رعایت اللہ فاروقی
گفتار و پندار

یوسف سراج
نقش قدم


عمر قاضی
لالہ صحرائ

عبدالرفع رسول
مکتوب سری نگر

احمد اعجاز
کہانی کی کہانی

خالد ایچ لودھی
دل کی باتیں

رحمت علی رازی
درون پردہ

وسی بابا
باتاں


راحیل اظہر
غبارِخاطر

محمد عامر رانا
اقلیم در اقلیم