مکرمی!عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) نے خبردار کیا ہے کہ کورونا کے خاتمے کا امکان نہیں،اس کے ساتھ جینے کا ڈھنگ سیکھنا ہو گا۔آگہی اور احتیاطی تدابیر کے ذریعے اس وائرس کی ہلاکت خیزی کا مقابلہ کرنا ہو گا- وبا پر کنٹرول کے لئے طویل سفر ابھی باقی ہے-اِس لئے لاک ڈاؤن میں نرمی جلد بازی میں نہ کی جائے- ویکسین کی دستیابی سے قبل حالات کا معمول پر آنا ممکن نظر نہیں آتا۔دْنیا کے جو مْلک کورونا کووِڈ19 کی وبا سے شدید طور پر متاثر ہوئے ہیں وہاں بھی اب ایسی طویل المیعاد منصوبہ بندی کی جا رہی ہے جس کے تحت لاک ڈاؤن آہستہ آہستہ کھولے جا رہے ہیں- اِس لئے ڈاکٹروں کی تنظیمیں اِس بات پر زور دے رہی تھیں کہ لاک ڈاؤن کھولا نہ جائے، عالمی ادارہ صحت کے تازہ انتباہ کے بعد کورونا رْت میں زندگی گزارنے کے لئے نئے سرے سے منصوبہ بندی کرنے کی ضرورت ہے پاکستان میں بھی کورونا کے ساتھ جینے کا شعور اْجاگر کرنا اوراس کے ساتھ ایس او پیز پرسختی کے ساتھ عمل کرانا بھی ضروری ہو گا لاپروائی کا نتیجہ خطرناک ہو گا۔ (جمشیدعالم صدیقی لاہور)