اسلام آباد(خصوصی نیوز رپورٹر) وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوجی فوادحسین چودھری نے کہا ہے کہ پاکستان سٹینڈرڈز اینڈ کوالٹی کنٹرول اتھارٹی(پی ایس کیو سی اے )بجلی سے چلنے والے رکشوں کیلئے معیارات وضع کر رہی ہے اور توقع ہے کہ اگلے 6سے 8ماہ میں بجلی سے چلنے والے 10ہزار رکشوں کے پہلے بیج کا اجرا کر دیا جائیگا۔ بدھ کو اپنے ایک ٹویٹ میں وفاقی وزیر نے کہا کہ بجلی سے چلنے والے رکشوں کے اجرا کے بعد اگلے تین سال کے دوران انجن والے رکشوں پرمکمل پابندی عائد کر دی جائیگی۔پی ایس کیو سی اے حکام کا کہنا ہے کہ اتھارٹی الیکٹرک رکشوں کیلئے معیارات تیار کر رہی ہے جو ایندھن سے نہیں بلکہ بیٹری سے چلیں گے ۔