لاہور(کامرس رپورٹر،نمائندہ خصوصی سے )صوبائی وزیر صنعت میاں اسلم اقبال اور چیف سیکرٹری پنجاب کامران علی افضل کی زیر صدارت سول سیکرٹریٹ میں اجلاس ہوا جس میں اشیاء ضروریہ کی قیمتوں، دستیابی اور پرائس مجسٹریٹس کی کارکردگی کا جائزہ لیا گیا ۔اس موقع پر صوبائی وزیر صنعت میاں اسلم اقبال نے صوبائی وزیر کا گرانفروشی میں ملوث پائے جانے پر دکان ایک ہفتہ کیلئے سیل کرنے کا حکم دیا اور کہا کہ انتظامیہ روزانہ کی بنیاد پر منڈیوں میں نیلامی کے عمل کی مانیٹرنگ کرے ۔مانیٹرنگ رپورٹ محکمہ صنعت و تجارت کو بھجوائی جائے ۔ضلعی انتظامیہ انٹرنیشنل مارکیٹ میں دالوں کی قیمتوں میں ردوبدل کے مطابق قیمتوں کا تعین کرے ۔آٹا، چینی، گھی کی دستیابی اور قیمتوں کی مانیٹرنگ پر خصوصی توجہ دی جائے ۔دکانوں پر ریٹ لسٹوں کونمایاں طور پر آویزاں کرایا جائے ۔قیمتوں کی خلاف ورزی کی شکایت پر فوری ایکشن لیا جائے ۔جعلی رسیدوں پر جرمانے کر کے قومی خزانے کو نقصان پہنچانے کا عمل برداشت نہیں کیا جائے گا۔جرمانے کی صورت میں ای چالان جاری کرنے کا نظام وضع کیا جائے آئندہ صرف نوٹیفائیڈ مجسٹریٹ ہی پرائس چیکنگ کا مجاز ہوگا۔ چیف سیکرٹری پنجاب نے کہا کہ عام آدمی کا سب سے بڑا مسئلہ مہنگائی ہے ۔مقررہ نرخوں پر عملدرآمد کرانا انتظامی افسران کی ذمہ داری ہے ۔اشیاء ضروریہ کی قیمتوں میں مارکیٹ میکانزم کے ذریعے استحکام لایا جائے ۔مختلف اضلاع میں اشیاء کی قیمتوں میں فرق کی وجوہات کا تعین کیا جائے ۔