ظفر وال، درمان (تحصیل رپورٹر، نمائندہ 92 نیوز، مانیٹرنگ ڈیسک،آن لائن )مسلم لیگ(ن) کی مرکزی نائب صدر مریم نوازنے کہا ہے مقدمات سے کس کوڈراتے ہو، عمران خان ڈرپوک اعظم ہے جو پیچھے سے وار کرتا ہے ،عمران خان کی حیثیت نہیں کہ وہ کسی کو این آر او دے بلکہ چند دن بعد خود این آر او مانگے گا،نواز شریف چاہتے تو ایک نہیں 100 این آر او ان کی جھولی میں پھینک دیئے جاتے لیکن وہ آج بھی جیل میں ڈٹ کرکھڑے ہیں،نوازشریف کی آف شور کمپنی نہیں تھی پھر بھی سزا ملی،انہیں اقامے جیسے مذاق پر وزیراعظم کی کرسی سے ہٹایا گیا اور جب سے انہیں ہٹایا گیا ہے تیزی سے ترقی کرتا ہوا ملک تنزلی کی جانب آگیا، نوازشریف کا 2018 کا جیتا ہوا الیکشن چوری کیا گیااور عمران خان کو اقتدارمیں لایا گیا،نوازشریف مشرف کے دورمیں 14 ماہ قید کاٹ چکا اور سات سال جلا وطن رہا،انہیں دو مرتبہ عمرقید کی سزا ہوئی۔ظفر وال میں جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے مریم نواز نے کہاعمران خان نے کبھی کوئی کاروبار اور نوکری نہیں کی،کیا نیب میں اتنی جرات ہے ان پرآمدن سے زائد اثاثوں کا مقدمہ بنائے ، الیکشن کمیشن کے پاس عمران خان اورپی ٹی آئی کیخلاف ثبوت ہیں ،کسی میں اتنی جرات ہے اشتہاری کو کٹہرے میں کھڑا کرے ،وہ تین سوکنال کے گھرمیں رہتا اورصرف ایک لاکھ روپے ٹیکس دیتا ہے ، بنی گالہ کا گھربغیراین اوسی کے بنا،کسی میں ہمت ہے گھرکوگرائے ، جس نے ساری عمر دوسروں کی جیبوں کا کھایا ہو اسے کیا پتا عام آدمی کیسے گزارا کرتا ہے ، عمران نیازی کو پتہ ہے کہ وہ پہلی اور آخری مرتبہ اقتدار میں آیا ہے ،وہ عوام کو مشکل میں ڈال کرلندن فرار ہوجائے گا، اس کے بچے اور سب کچھ وہی ہے ،مشرف کی تحقیقات کرتے ہوئے عمران نیازی کے پرجلتے ہیں۔علیمہ خان کا واحد ذریعہ معاش سلائی مشین ہے ،انہوں نے اقبال جرم اور جرمانہ ادا کیا، نیب مریم نواز کو پکڑ لیتی ہے لیکن اعتراف جرم کرنے والی کو نہیں پکڑتی،اسے شہبازشریف،حمزہ ،شاہد خاقان ،سعد رفیق نظرآتے ہیں مگر وزرا نہیں۔ رات کو بارہ بجے پتا نہیں کس ضرورت کے تحت خطاب کیا گیا؟ نیا پاکستان بننے ہی والا تھا کہ پیچھے سے اچانک سے آواز بند کر دی گئی،بجٹ میں عوام پر قیامت ٹوٹی،ہر چیز مہنگی ہو چکی ۔ ’نالائق اعظم‘ سے جب آلو پیاز مہنگا ہونے کا پوچھا جائے گا تو کہیں گے نواز شریف کو گرفتار کر لیا، جب فاقوں کا پوچھو گے تو جواب دیں گے حمزہ شہباز کو گرفتار کر لیا۔ہر صورت عوام کی آواز بنیں گے ،حکومت کے خلاف جلددما دم مست قلندر ہوگا،عمران خان اشہاری مجرم ہے ۔