اداریہ



ا یشیائی ترقیاتی بنک کی امداد


مشیر خزانہ ڈاکٹر عبدالحفیظ شیخ کا کہنا ہے کہ ایشیائی ترقیاتی بنک (اے ڈی بی) پاکستان کو 3ارب 40کروڑ ڈالر کی امداد دے گا جو ہمارے بجٹ کو سپورٹ کرنے کے لئے ہو گی ۔معاشی نقطہ نظر سے تو یہ بہت اچھی خبر ہے کہ اس سے پاکستان میں مختلف شعبوں میں اصلاحات کے علاوہ معاشی استحکام پیدا کرنے اور زرمبادلہ کے ذخائر بڑھانے میں مدد ملے گی تاہم ضرورت اس امر کی ہے کہ یہ امداد جس مقصد کے لئے مل رہی ہے اسے ہر صورت پورا کیا جائے۔ ماضی کی حکومتیں آئی ایم ایف‘ عالمی بنک ‘ ایشائی
پیر 17 جون 2019ء

مسئلہ کشمیر کا اقوام متحدہ کی قرار دادوں کے مطابق حل ضروری

پیر 17 جون 2019ء
اداریہ
ترک صدر رجب طیب اردوان نے دوشنبے میں عالمی سکیورٹی کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مسئلہ کشمیر کو اقوام متحدہ کی قرار دادوں اور کشمیریوں کی خواہش کے مطابق حل ہونا چاہیے، انہوں نے مزید کہا کہ مسئلہ کشمیر پاکستان اور بھارت کے درمیان دیرینہ تنازع ہے جو دونوں ممالک کے درمیان مذاکرات کے بعد ہی حل ہو سکتا ہے۔ اس میں کوئی دو رائے نہیں کہ جنوبی ایشیا ء کے دیرپا امن کے لئے مسئلہ کشمیر کا حل ناگزیر ہے۔70سال سے یہ مسئلہ اقوام متحدہ کی قرار دادوں پر موجود ہے لیکن اس پر کوئی پیشرفت نہیںہورہی
مزید پڑھیے


بجلی کی قیمتوں میں پھر اضافہ

اتوار 16 جون 2019ء
اداریہ
نیشنل الیکٹرک پاور ریگولیٹری اتھارٹی نیپرا نے فی یونٹ بجلی ایک روپے 49پیسے مہنگی کرنے کی منظوری دیدی ہے۔ جس سے صارفین پر 190ارب روپے کا بوجھ پڑے گا۔ اس وقت ملک میں مہنگائی کا طوفان آیا ہوا ہے۔ پٹرول‘ بجلی اور اشیاء خورونوش کی قیمتیں عوام کی پہنچ سے دور ہو چکی ہے لیکن بجٹ کی منظوری سے قبل نیپرا نے بجلی کی قیمتوں میں فی یونٹ ایک روپیہ 49پیسے اضافہ کر کے عوام کے کندھوں پر مزید بوجھ ڈال دیا ہے جس سے عوام کا جینا مزید دشوار ہو جائے گا۔ حکومت ایک طرف یہ کہتی ہے کہ
مزید پڑھیے


حکومتی اراکین کا اسمبلی اجلاس میں شوروغوغا

اتوار 16 جون 2019ء
اداریہ
قومی اسمبلی کی تاریخ میں پہلی بار حکمران جماعت کے احتجاج کے باعث نا صرف اپوزیشن لیڈر کو تقریر کرنے کا موقع نہ مل سکا بلکہ سپیکر کو ایک ہی دن میں تین بار اجلاس ملتوی کرنا پڑا۔ مہذب معاشروں میں اختلاف رائے کا ہی احترام نہیں کیاجاتا بلکہ مثبت تنقید حکمران جماعت کو خود احتسابی کا موقع بھی فراہم کرتی ہے۔ بدقسمتی سے وطن عزیز میں سیاست ذاتی مفادات اور پارٹی ایجنڈوں کی مرہون منت ہو کر رہ گئی ہے ۔رہی سہی کسر سیاسی جماعتوں میں آمرانہ رویہ نے نکال دی ہے، اگر ایسا نہ ہوتا تو سیاسی
مزید پڑھیے


پنجاب اور سندھ کے بجٹ

اتوار 16 جون 2019ء
اداریہ
پنجاب اور سندھ کی حکومتوں نے نئے مالیاتی سال کے بجٹ پیش کر دیے ہیں پنجاب کا بجٹ 23کھرب 57ارب روپے کا ہے جس میں درجنوں چھوٹے اور درمیانے کاروباروں پر ٹیکس عائد کرنے کی تجویز دی گئی ہے۔ جبکہ وزیر اعلیٰ سندھ نے 1217ارب حجم کا صوبائی بجٹ کسی خسارے کے بغیر پیش کیا۔ دونوں بڑے صوبے قومی تعمیر و ترقی میں اہم حیثیت رکھتے ہیں۔ کاروبار اور ٹیکس وصولیوں کے لحاظ سے بھی دونوں ممتاز ہیں اس لئے ان کے بجٹ کو قومی اہداف کے تناظر میں خصوصی اہمیت دی جاتی ہے۔ وفاقی نظام صوبائی اکائیوں سے تعمیر ہوا
مزید پڑھیے




اہل فلسطین عالم اسلام کی مدد کے منتظر

اتوار 16 جون 2019ء
اداریہ
ماضی میں فلسطین ملک شام کا ایک صوبہ تھا، تا ہم بیت المقدس کی وجہ سے اس کی ایک خاص شناخت رہی ہے، موجودہ زمانے میں وہ ملک کے شام کے جنوب مغرب میں واقعہ ہے اور وہ عالم عربی کے افریقی اور ایشائی دونوں حلقوں کو ملاتا ہے، اور ایشیائ، افریقہ اور یورپ تینوں براعظموں کو مابین رابطہ اور پل کا کام کرتا ہے۔ اس کے شمال میں لبنان اور جنوب میں مصر واقع ہے، مشرق میں اس کی سرحد اردن سے جاکر ملتی ہے، فلسطین کا کل رقبہ 10،162 مربع میل ہے، فلسطین کی سطح مرتفع
مزید پڑھیے


کسانوں کو سبسڈی نہیں جدید بیج کی ضرورت

هفته 15 جون 2019ء
اداریہ
سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے غذائی تحفظ و تحقیق نے گزشتہ تین سال سے زرعی اجناس کی پیداوار میں کمی پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ کاشتکاروں کو سبسڈی دیں تا کہ زرعی اجناس کی پیداوار بڑھائی جا سکے۔ پاکستان ایک زرعی ملک ہے جس کی زراعت جی ڈی پی کا 18فیصد ہے لیکن بدقسمتی سے یہاں ہر سال زرعی پیداوار میں کمی واقع ہو رہی ہے، جس کی وجہ شعبہ زراعت سے حکومتی عدم دلچسپی ہے، حکومتی سطح پر کسانوں کی مدد کے بڑے دعوے کئے جاتے ہیں لیکن عملی طور پر حکومت کوئی اقدام نہیں کرتی۔
مزید پڑھیے


ڈیمز فنڈ کی سرمایہ کاری: مستحسن فیصلہ

هفته 15 جون 2019ء
اداریہ
سپریم کورٹ نے ڈیمز فنڈ میں موجود رقم کی سرمایہ کاری کرنے کا فیصلہ کرتے ہوئے سٹیٹ بنک کو فنڈ میں موجود10ارب 60کروڑ روپے نیشنل بنک کومنتقل کرنے کا حکم دیا ہے اور کہا ہے کہ نیشنل بنک اس منافع منافع دے گا جبکہ سٹیٹ بنک نے 6ماہ تک 10ارب روپے رکھے لیکن اس کا منافع نہیں دیا جس کا اس سے پوچھا جائے گا ۔اس میں کوئی دو رائے نہیں کہ ملک میں اس وقت زیادہ سے زیادہ ڈیمز تعمیر کرنے کی ضرورت ہے۔ دور ایوبی کے بعد ماضی کی کسی بھی حکومت نے اس طرف توجہ نہیں دی
مزید پڑھیے


شنگھائی تعاون تنظیم سے وزیر اعظم کا خطاب

هفته 15 جون 2019ء
اداریہ
بشکیک میں شنگھائی تعاون تنظیم کے سربراہ اجلاس سے خطاب کرتے وزیر اعظم عمران خان نے بجا طور پر طویل مدت سے حل طلب تنازعات کو خطے کی ترقی میں رکاوٹ قرار دیا۔ انہوں نے کہا کہ شنگھائی تعاون تنظیم خطے کے تنازعات کو حل کرنے کے لئے موثر کردار ادا کر سکتی ہے۔ وزیر اعظم نے خطے کی ترقی اور رکن ممالک کے مابین تعلقات میں بہتری کے لئے مقامی کرنسی‘ انفراسٹرکچرل روابط‘ ثقافتی ٹورازم‘ فوڈ سکیورٹی‘ انسانی بہبود اور وائٹ کالر جرائم کے خلاف مشترکہ حکمت عملی اختیار کرنے پر زور دیا۔ وزیر اعظم عمران خان نے رکن
مزید پڑھیے


ایڈز پر قابو پانے کے لئے فوری اقدامات کی ضرورت

جمعه 14 جون 2019ء
اداریہ
فیصل آباد سے یہ تشویشناک اطلاعات سامنے آئی ہیں کہ وہاں ایڈز کے مریضوں کی تعداد میں اضافہ ہو گیا ہے۔ الائیڈ ہسپتال کی انتظامیہ کی رپورٹ کے مطابق کل 2680 مریضوں میں سے 2300مرد اور 296خواتین اس موذی مرض میں مبتلا ہیں یہ انتہائی خطرناک صورت حال ہے۔ اس طرف فوری طور توجہ دینے اور مرض پر قابو پانے کی ضرورت ہے۔ لاڑکانہ سے شروع ہونے والا ایڈز کا یہ سلسلہ ملک کے باقی علاقوں میں پھیلتا جا رہا ہے اور محکمہ صحت اس پر خاموشی اختیار کئے ہوئے ہے حالانکہ گزشتہ ماہ یہ اطلاعات دی جا چکی ہیں
مزید پڑھیے