BN

اشرف شریف



جغرافیائی تبدیلیوں کا امکان، کشمیر اور اُمہ


عید کے روز قربان گاہوں سے جتنا خون بہا اور کراچی میںجتنی بارش ہوئی بھارتی فوج نے اب تک اہل کشمیر کا اتنا لہو تو بہا دیا ہو گا۔ کشمیر ریاست نہیں بلکہ پاکستانیوں کی شہ رگ ہے۔ برصغیر کی تقسیم کے وقت اس تنازع کا باقی رہنا ثابت کرتا ہے کہ برطانوی سلطنت کی گڈ گورننس ایک آنے کی نہیں تھی۔ بہتر سال سے اس تنازع کا لہو اگلتے رہنا اس بات کی دلیل ہے کہ امریکہ کی سرکردگی میں بین الاقوامی نظام نہ تو مہذب ہو سکا اور نہ ہی عالمی امن کے لئے مستحکم اصول وضع کر
بدھ 14  اگست 2019ء

یہی بہت ہے کہ ہم مشعلیں جلا کے جیئے

پیر 05  اگست 2019ء
اشرف شریف
اخبار کی ملازمت کو دو سال ہوئے تھے۔ ایک دن نیوز روم میں ہمارے پروف ریڈر کے دماغ کی شریان پھٹ گئی۔ ہسپتال سے پہلے وہ اللہ کے پاس پہنچ گئے۔دوسرا واقعہ اعجاز خاور کا ہے۔ اعجاز خاور لیاقت پور سے آیا۔ لکھنے کا شوق تھا، اطہر ندیم صاحب نے مجھے اس کی تحریر کا جائزہ لینے کو کہا۔ اس کے پاس چھوٹے موٹے اخبارات اور رسائل میں شائع تحریروں کی فوٹو کاپیاں تھیں۔ مجھے اس کی تحریر پختہ محسوس ہوئی۔ وہ کالم لکھنے لگا، کچھ عرصہ بعد ادارتی شعبہ میں گنجائش بنی۔ میں انچارج تھا۔ بے روزگار اعجاز خاور
مزید پڑھیے


قبائلی اضلاع میں تبدیلی کا آغاز

پیر 29 جولائی 2019ء
اشرف شریف
عمران خان کا دورہ امریکہ ایک ایسی ابلاغیاتی مچھلی ثابت ہوا جو کئی واقعات کو چھوٹی مچھلی سمجھ کر کھا گیا۔ یہ دورہ ہر لحاظ سے کامیاب رہا۔ بس اس پامال موضوع پر مزید کچھ کہے بنا ہمیں قبائلی اضلاع جانا ہے۔ چند روز قبل میرے دوست زیب اللہ وزیر نے ایک تصویر بھیجی۔ زیب اللہ سرسبز پہاڑی چوٹی پر کھڑا تھا اور اس کے عقب میں گھاس سے ڈھکی بل کھاتی زمین کے قطعات پر خوبصورت درخت ایستادہ تھے۔ زیب اللہ کچھ برس قبل لاہور میں مجھ سے انٹرنیشنل لاء اورانٹرنیشنل ریلیشنر پڑھا کرتا تھا۔ اس نے بتایا کہ
مزید پڑھیے


ساغر اور جالب

پیر 22 جولائی 2019ء
اشرف شریف
کیا یہ دنیا سیاستدانوں نے بنائی ہے؟ آپ حمورابی‘ افلاطون‘ پنڈت چانکیہ ‘ روسو اور ہمارے عہد کے نوم چومسکی اور ہنری کسنجر جیسے فلسفیوں تک کو پڑھے ہوں گے۔ پھر بتائیے کیا یہ دنیا سیاسی مفکرین نے بنائی ہے؟ ہم جس دنیا میں رہتے ہیں اسے بادشاہوں اور شاعروں نے بنایا ہے۔ شاعر خواب دیکھتا ہے۔ بادشاہ خواب پورے کرتا ہے۔ بادشاہ کے خواب جنگ میں غلبہ حکومت‘ طاقت اور مال و زر میں اضافہ سے متعلق ہوتے ہیں۔ شاعر کے خواب انسانی آزادیوں‘ اظہار رائے کے حق اور محبت کے سنہری ریشم سے بنے ہوتے ہیں۔ یوں بادشاہوں
مزید پڑھیے


ریاست یا مخالفین:تاجروں نے کس کا ساتھ دیا

پیر 15 جولائی 2019ء
اشرف شریف
تاجروں نے ہڑتال کی۔ کس کے خلاف؟ اس ریاست کے خلاف جس کے وزیر اعظم اور آرمی چیف ایک ہی بات کہہ رہے ہیں کہ اب ہر صاحب استطاعت کو ٹیکس دینا ہو گا۔ سیاست کا ایک بیانیہ ریاست مخالف ہے۔ یہ بیانیہ پاکستان میں کئی شکلوں میں ابھرا۔ جماعت اسلامی اور جمعیت علمائے اسلام نے جب پاکستان کے قیام کی مخالفت کی تو اس وقت صورتحال مختلف تھی۔ ملک آزاد ہوا تو ان دونوں جماعتوں کی قیادت نے آئین پاکستان کے سامنے خود کو جھکا دیا۔ ان دونوں جماعتوں کے علاوہ بھی کچھ قوتیں پاکستان کے قیام کی مخالف
مزید پڑھیے




افغانستان سے اچھی خبریں آنے والی ہیں

اتوار 07 جولائی 2019ء
اشرف شریف
طالبان امریکہ مذاکرات کا سلسلہ شروع ہوا تو دونوں فریق اپنے اپنے ایجنڈے کے ساتھ میز پر آئے۔ امریکہ ابتدائی مرحلے میں افغان طالبان کو انگیج کر کے فائر بندی چاہتا تھا۔ افغان طالبان چاہتے تھے کہ حملہ آور ان کو فاتح جیسا پروٹوکول دے اور انخلاء کے بعد کی صورت حال کو ان پر چھوڑ دے۔ مذاکرات کے پہلے چھ مرحلے ہوئے‘ ہر بار زلمے خلیل زاد یہ تاثر دیتے رہے کہ افغان تنازع کے حوالے سے خوشخبری آیا چاہتی ہے۔ ہر بار خوشخبری آئندہ مرحلے پر موقوف ہو گئی۔ مذاکرات کے آغاز میں امریکی وفد کا گھمنڈ اور
مزید پڑھیے


صادق سنجرانی کو کون ہٹائے گا؟

اتوار 30 جون 2019ء
اشرف شریف
مولانا فضل الرحمن‘ بلاول بھٹو زرداری اور مریم نواز جن دو باتوں پر متفق ہوئے ان میں سے ایک چیئرمین سینٹ صادق سنجرانی کو ہٹانا اور دوسری وفاقی بجٹ قومی اسمبلی میں منظور نہ ہونے دینا تھا۔ ایک حکمت عملی اختیار کی گئی۔ جو پی ٹی آئی رکن کسی وجہ سے اپنے عہدے سے ہٹایا گیا یا تبدیل کیا گیا اس سے ہمدردی کی آڑ میں اسے عمران خان سے بیزار کرنے کی کوشش کی گئی۔ بلاول بھٹو نے فواد چودھری کو راہ چلتے روک کر معانقہ کیا۔ پنجاب اسمبلی میں نیب کی حراست میں صوبائی وزیر سبطین خان آئے
مزید پڑھیے


مولانا کی انتشار پسند بیٹریاں

پیر 24 جون 2019ء
اشرف شریف
حکومت کے سامنے اقتدار سنبھالنے کے بعد پہلی بار چیلنج آیا ہے۔ بجٹ پیش کیا جا چکا۔ بحث جاری ہے اور اب اسے پارلیمنٹ سے منظور کرانا ہے۔ دوسرا چیلنج یہ ہے کہ اپوزیشن جماعتوں کے درمیان رابطے بڑھے ہیں۔ ساری اپوزیشن جماعتیں اب حکومت کو کچھ مہلت دینے کا موقف ترک کر کے مولانا فضل الرحمن کی رائے سے اتفاق کر رہی ہیں یعنی حکومت کے خلاف فوری تحریک کا آغاز۔ قومی اسمبلی میں تحریک انصاف کو بجٹ منظور کرانے کے لئے ق لیگ‘ ایم کیو ایم اور بلوچستان نیشنل پارٹی کے اختر مینگل کی حمایت درکار ہے۔ ایم
مزید پڑھیے


کس کی بالادستی کی جنگ؟

پیر 17 جون 2019ء
اشرف شریف
اگر آپ کو اس بات کا اندازہ کرنے میں مہارت ہے کہ کون سی جماعت اپنی قیادت کی کن خامیوں کو چھپاتی ہے تو آپ یہ بھی بتا سکیں گے کہ وہ آئین کی کس شق کا دفاع کرتے ہوئے جمہوریت اور عوام کا نام استعمال کریں گے۔ اسمبلی کو تحلیل کرنے کا صدارتی اختیار 58ٹو بی کی شکل میں آئین کا حصہ رہا۔ پارلیمنٹ کے رکن کے طور پر آئین کے آرٹیکل 62اور 63کی پابندی کی بات کریں تو تمام جماعتیں مخالفت کریں گی۔ یہی وجہ ہے کہ ایک آئینی شرط کو سب اپنی نااہلی چھپانے کے لئے فعال
مزید پڑھیے


’’منطق الطیر، جدید‘‘ ناول، تاریخ اور عشق

پیر 10 جون 2019ء
اشرف شریف
ریل کی پٹڑی پر ہوا ابلتی ہوئی محسوس ہو رہی تھی۔ حرارت کی لہریں تھیں جو کبھی نیچے سے اوپر کو اٹھتی اور کبھی اوپر سے نیچے کی جانب اترتی معلوم ہوتیں۔ گائوں میں چھوٹی چھوٹی نہروں کے کنارے کچے راستے اس موسم میں دھول سے اٹ جاتے ہیں۔ کیکر پیلے پھولوں کی چادر اتار کر پھلیوں کے گہنے کانوں میں آویزاں کر لیتے ہیں۔ ٹاہلیوں کی چھائوں فاختائوں کا ٹھکانہ بنتی ہے۔ گھاس حبس کی باس دیتا ہے اور سانپ راتوں کو باہر نکل آتے ہیں۔ میری یہ لفظی تصویریں منطق الطیر، جدید کی تصویروںکے سامنے ہیچ ہیں۔ ہم زمین
مزید پڑھیے