Common frontend top

جاوید صدیق


ایک سو خاندان؟


جب ذوالفقار علی بھٹو نے ایوب خان کابینہ سے مستعفی ہو کر ایوب مخالف سیاست شروع کی تو اُنہوںنے اپنا بیانیہ اس بنیاد پر بنایا کہ ایوب حکومت میں دولت چند ہاتھوں میں چلی گئی۔ چند خاندان انتہائی امیر ہوگئے ہیں جبکہ مشرقی اور مغربی پاکستان کے عوام کی اکثریت غریب سے غریب تر ہوگئی ہے۔ بھٹو صاحب نے یہ الزام لگایا کہ پاکستان کے بائیس خاندان پاکستان کی ساری دولت پر قابض ہوگئے ہیں۔ ایوب حکومت کی معاشی پالیسیوں سے دولت چند خاندانوں نے ہتھیالی ہے۔ بھٹو صاحب نے 30 نومبر1967 ء میں لاہور میں پیپلز پارٹی کے
جمعرات 02 نومبر 2023ء مزید پڑھیے

زیتون کی شاخ اور پستول

اتوار 22 اکتوبر 2023ء
جاوید صدیق
فلسطین کی تحریک آزای کے بانی و ہیرو یاسر عرفات نے 1974 میں اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی سے خطاب کرتے ہوئے اپنے دائیں ہاتھ میںزیتون کی شاخ لہرا کر اسرائیل کے ساتھ مذاکرات کرنے کی پیشکش کی تھی ۔یہ ایک تاریخی موقع تھا۔ یاسر عرفات نے جو اکثر اپنی مخصوص وردی میں ہمیشہ پستول بھی لٹکائے رکھتے تھے یہ بھی کہا تھا کہ میرے ایک ہاتھ میں زیتون کی شاخ ہے اور دوسرے ہاتھ میں پستول ہے اگر مذاکرات کی پیشک مسترد کردی گئی تو پھر ہم جہاد کیلئے تیار ہیں۔ اس سے قبل فلسطینی مجاہدہ لیلیٰ خالد ایک
مزید پڑھیے


سودے بازی سے بنی حکومتیں

پیر 02 اکتوبر 2023ء
جاوید صدیق
ملک کا میڈیا اور سیاسی حلقے چیخ رہے ہیں کہ پاکستان میں سودے بازی اور سیاسی انجینئرنگ کے ذریعے حکومتیں بنانے کا سلسلہ اب ترک کیا جانا چاہیے۔ سودے بازی سے بنائی گئی حکومتیںنہ تو مسائل حل کر سکتی ہیں اور نہ آزادی سے فیصلہ کر سکتی ہیں۔حالیہ سیاسی تاریخ پر نظر ڈالیں تو جنرل ضیاء الحق نے 1985میں غیر جماعتی بنیادوں پر الیکشن کرانے کے بعد بھی مارشل لا اٹھانے کے لئے شرائط عائد کر دی تھیں ۔ اپنی ہی بنائی ہوئی اسمبلی پر دباؤ ڈال کر آرٹیکل 58 (2) بی آئین میں شامل کرایا گیا جس سے پارلیمانی
مزید پڑھیے


’’گڈ لک ٹو چیف جسٹس قاضی فائز عیسیٰ ‘‘

بدھ 20  ستمبر 2023ء
جاوید صدیق
جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے انتیسیوں چیف جسٹس پاکستان کا حلف اٹھا لیا ہے ۔ ان کے پیش رو جسٹس عمر عطاء بندیال اپنی مدت پوری کرنے کے بعد رخصت ہوگئے ۔ جسٹس عمر عطابندیال کا دور سپریم کورٹ کے لیے ایک بھاری دور تھا۔اس دور کے سیاسی تنازعات اور کشمکش نے سپریم کورٹ کو اپنی لپیٹ میں لئے رکھا ۔ سیاسی مقدمات جب عدالتوں میں جاتے ہیں تو عدالتوں کے لیے ایک بڑی آزمائش ہوتی ہے ۔پاکستان کی تاریخ یہ ہے کہ جب سیاسی فریق کے حق میں فیصلہ آجاتا ہے تو وہ اسے انصاف کی فتح قرار دیتا
مزید پڑھیے


بڑے چوروں کو پکڑو !

بدھ 13  ستمبر 2023ء
جاوید صدیق
پاکستان میں بدعنوانی کے خاتمے کے لیے اتنی کوششیں ہوچکی ہیں کہ لوگوں کو یاد ہی نہیں کتنی مرتبہ یہ اعلان ہوچکا ہے کہ بدعنوان عناصر کے گرد گھیرا تنگ کرنے کا فیصلہ کرلیا گیا ہے ۔ایوب خان نے جب 27 اکتوبر 1958ء کو مارشل لاء لگایا تو فوری طور پر بدعنون سیاستدانوں اور سرکاری افسروں کے احتساب کا اعلان کیا گیا ۔ سیاستدانوں کے لئے’ ایبڈو ‘ کے نام سے قانون بنایا گیا اور انہیں جیل میں ڈال کر ان کے سیاست میںحصہ لینے پر پابندی لگادی گئی ،ساتھ ہی کرپٹ عناصر ،سرکاری افسران کے خلاف
مزید پڑھیے



’’پیچ و تاب زندگی‘‘

منگل 29  اگست 2023ء
جاوید صدیق
بریگیڈیئر صولت رضا کی دو کتابیں ’’کاکولیات ‘‘ اور ’’غیر فوجی کالم‘‘ تو میں نے کافی عرصے پہلے پڑھ لی تھیں ۔ اب تو ان کی تیسری کتاب ’’پیچ و تاب زندگی ‘‘ جوکہ ان کی خود نوشت ہے چند روز پہلے ملی ہے ۔بریگیڈیئر صاحب نے مہربانی کی اور خاکسار کو یاد رکھا اور کتاب گھر کے ایڈریس پر بھیج دی ۔ بریگیڈیئرصولت رضا کو آئی ایس پی آر کی ’’دائی ‘‘ کہنا غلط نہ ہوگا ۔ وہ اس ادارے کی اندر کی باتیں خوب جانتے ہیں ۔ فوج کے تعلقات کا رکے اس ادارے کا ایک دور
مزید پڑھیے


پی ڈی ایم کا ورثہ

جمعرات 17  اگست 2023ء
جاوید صدیق
اپریل 2022ء میں تیرہ سیاسی جماعتوں کے اتحاد نے پی ٹی آئی کی حکومت کو اقتدار سے ہٹانے کے بعد ملک کو کیا دیا؟ یہ بہت اہم سوال ہے۔اگلے الیکشن میں یہ سوال ضرور اٹھے گا کہ عمران حکومت پر اپوزیشن کا سب سے بڑا الزام بری حکمرانی یا مس گورننس تھا۔عمران حکومت معاشی صورتحال کو سلجھانے میں ناکام رہی تھی۔مہنگائی کے خاتمے اور بیرون ملک سے اربوں ڈالر کی انوسٹمنٹ لانے کے اس کے دعوے غیر حقیقی تھے۔مہنگائی کے زور کو کنٹرول کرنا بھی پی ٹی آئی کے بس کی بات نہیں تھی۔اہم بات یہ تھی کہ عمران
مزید پڑھیے


دھندلامنظر

جمعرات 03  اگست 2023ء
جاوید صدیق
قومی اسمبلی توڑنے کی تاریخ کا اعلان حکمران اتحاد کی طرف سے کر دیا گیا ہے لیکن ابھی تک نگران حکومت کی تشکیل اور انتخابات کی تاریخ کے بارے میں بے یقینی کی صورت حال ہے۔ کہا جارہا ہے کہ نگران وزیراعظم کے لیے پانچ نام شارٹ لسٹ کر لیے گے لیکن یہ نام ابھی سامنے نہیں آئے۔ حکمران اتحاد کے سرکردہ لیڈروں کے درمیان مشاورت جاری ہے۔ اسمبلی توڑنے کی تاریخ کا جواعلان کیا گیا ہے ابھی اس میں ایک ہفتہ باقی ہے لیکن ملک کا سیاسی منظر بہت غیر واضح ہے۔ یہ بھی دعوی کیا جا رہا ہے
مزید پڑھیے


’’یہاں کسی کو کون پوچھتاہے‘‘

جمعه 21 جولائی 2023ء
جاوید صدیق
اگر آپ پارلیمنٹ کی پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کا ریکارڈ چیک کریں تو معلوم ہو گا کہ سرکاری محکموں میں گزشتہ تین دہایوں میں کھربوں روپے کی کرپشن ہوئی ہے۔ لاکھوں صفحات پر مشتمل رپورٹیں کمیٹی کی لائبریری میں موجود ہیں ۔خاکسار کو یاد ہے کہ جب محمد خان جونیجو وزیر اعظم بنے تو جھنگ سے قومی اسمبلی کے رکن سردازادہ محمد علی شاہ کو پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کا چیئرمین بنایا گیا ۔میں اس وقت نوا ئے وقت کا رپورٹر تھا شاہ صاحب سے ملاقاتیں ہوتی رہیں وہ بہت پریشان رہتے تھے۔ پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کے اجلاس اس وقت بھی
مزید پڑھیے


دنیا کی نظریں پاکستان پر

بدھ 12 جولائی 2023ء
جاوید صدیق
کچھ حلقے اس بات پر حیرت کا اظہار کر رہے ہیں کہ آئی ایم ایف کا وفد عمران خان سے ملاقات کرنے ان کی لاہور والی اقامت گاہ پر کیوں گیا۔اس میں حیرت کی کوئی بات نہیں۔جو کچھ پاکستان میں چند سالوں سے ہو رہا ہے۔ اس نے عالمی برادری خصوصاً پاکستان کو قرض دینے والے مالیاتی اداروں کو شکوک و شبہات میں مبتلا کر دیا ہے۔قرض دینے والے ادارے جن میں آئی ایم ایف‘ ورلڈ بنک‘ ایشیائی ترقیاتی بنک ‘ انٹرنیشنل فنانس کمیشن اور کئی دوسرے ادارے شامل ہیں۔ گزشتہ کئی دہائیوں سے پاکستان کو قرض دیتے چلے آئے
مزید پڑھیے








اہم خبریں