خاور نعیم ہاشمی



ایک یادگار تھپڑ اور جوابی حملہ


ایک سینئیر موسٹ اور بین الاقوامی شہرت کی حامل خاتون فیشن ڈیزائنر کی والدہ کسی زمانے میں فلموں میں چھوٹے موٹے رول کیا کرتی تھیں ، میں نے اس خاتون کو پہلی بار1968ء میں باری اسٹوڈیوز میں دیکھا , وہ فلور فائیو میں ایک گھنٹہ دورانیہ کی ڈاکومنٹری فلم ،، مقدس امانت ،، میں ایک معمولی سے رول کے لئے بلوائی گئی تھیں ، اس مزدور فنکارہ کی دس بارہ سال کی بیٹی بے بی بھی اسی فلم میں ایک اہم رول ادا کر رہی تھی،میرا کردار اس فلم میں مرکزی نوعیت کا تھا، رنگیلا میرے باپ
اتوار 04  اگست 2019ء

ریشماں کا نیا خاندانی پس منظر

جمعه 02  اگست 2019ء
خاور نعیم ہاشمی
عرصہ دراز کے بعد دوستوں کے ساتھ پہاڑوں اور سمندروں کی سیر کا موقع ملا، ذوالقرنین اور نعیمہ میاں بیوی ہیں اور دوستوں کے دوست، انہیں احمد فراز، منیر نیازی، اجمل نیازی، جاوید قریشی جیسی شخصیات کی مستقل میزبانی کا اعزاز بھی حاصل ہے، ان کے گھر کا دروازہ کبھی دوستوں کیلئے بند نہیں دیکھا، آپ جب بھی ان کے گھر جائیں نعیمہ کو ہمیشہ باورچی خانے میں پہلے سے موجود مہمانوں کیلئے کھانا تیار کرتے ہوئے دیکھیں گے، ان کے اکلوتے بیٹے غالب اقبال کا نام بھی احمد فراز صاحب نے رکھا تھا، ان کے حلقہ احباب میں زندگی
مزید پڑھیے


اعتراف جرم جان بخشی کی ضمانت نہیں ہوتا

اتوار 28 جولائی 2019ء
خاور نعیم ہاشمی
وزیر اعظم جناب عمران خان کے،، کامیاب ترین،، دورہ واشنگٹن کے بعد پتہ نہیں کیوں مجھے پرویز مشرف کے دور کا وہ سنسنی خیز واقعہ یاد آ گیا جب ایٹمی سائنسدان ڈاکٹر عبدلقدیر خان کو جبری طور پر پاکستان ٹیلی ویژن کی عمارت میں لے جایا گیا تھا، انہیں لکڑی کی ایک کرسی پر بٹھایا گیا، ان کے ہاتھ میں ایک کاغذ تھمایا گیا تھا، انہیں حکم تھا کہ اس پر جو لکھا ہے وہ انہوں نے کیمروں کے سامنے بولنا ہے، پھر کیمرے آن ہوتے ہیں پی ٹی وی کا اسٹوڈیو روشنیوں سے منور ہوجاتا ہے اور ہمارے
مزید پڑھیے


محبوبائیں اور جلد باز عاشق

جمعه 26 جولائی 2019ء
خاور نعیم ہاشمی
ہمارے’’محبوب ‘‘ وزیر اعظم عمران خان بے شمار ذاتی تجربات کے باوجود شاید اس فلسفے پر ادراک نہ رکھتے ہوں کہ چاہے دنیا کا کوئی بھی خطہ ہو، ہر جگہ محبوبائیں گرم جوش عاشقوں کو تو برداشت کر لیتی ہیں، جلد باز عاشقوں کو قبول نہیں کرتیں، محبوبائیں ہمیشہ جلد باز عاشقوں سے دنوں میں چھٹکارا حاصل کر لیتی ہیں، لوگ کہتے ہیں کہ امریکہ کے ،،کامیاب ترین،، دورے کے باوجود عمران خان ’’خالی ہاتھ‘‘واپس لوٹے ہیں۔ آپ پوچھیں گے کہ’’خالی ہاتھ‘‘ واپس لوٹنے سے کیا مراد ہے؟آپ نے بھی تو دیکھا ہوگا ماضی میں جب بھی کوئی
مزید پڑھیے


محبتیں ، دوستیاں اور ریا کاریاں

بدھ 24 جولائی 2019ء
خاور نعیم ہاشمی
حضرت علیؓ کاقول ہے۔۔۔۔۔۔۔۔ ’’اپنے ان دوستوں سے کنارا کشی کرلو، جن کا دوستانہ تمہارے دشمنوں سے بھی ہے‘‘سالہا سال پہلے جب میں نے یہ قول پڑھا تو کچھ اس طرح دل میں اترگیا کہ زندگی کو قرار آگیا، چاروں طرف سکون ہی سکون پھیل گیا،اور دوستوں کے حوالے سے کوئی بد اعتمادی باقی نہ رہی ،اب یہ قول مجھے یاد آیا ہے نیوز چینلز پر ’’ دنیا کے طاقتور ترین ملک کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور پاکستان کے معصوم‘‘ وزیر اعظم عمران خان کی وائٹ ہاؤس میں بالمشافہ ملاقات سے پہلے غیر روایتی مشترکہ پریس کانفرنس دیکھ کر۔ امریکی صدر
مزید پڑھیے




عشق کی تشریح آسان نہیں

اتوار 21 جولائی 2019ء
خاور نعیم ہاشمی
عشق ایک جذبہ ہے، مجازی ہو یا حقیقی، عشق کا کوئی دین دھرم نہیں ہوتا اور عشق محض مرد اور عورت کے درمیان ہی نہیں ہوتا، اور یہ بھی لازم نہیں کہ عشق مجازی محض دو انسانوں کے مابین ہی استوار ہو، عشق تو جنگل اور انسان کے مابین بھی ہوجاتا ہے، عشق ویرانوں اور روحوں کے درمیان بھی پروان چڑھتے ہیں۔ میں نے تو انسانوں کو بربادیوں سے محبتیں کرتے ہوئے بھی دیکھا ہے بسا اوقات توآدمی کسی ایک لمحے کے عشق میں بھی ڈوب جاتا ہے، لمحہ بیت جاتا ہے مگر اس لمحے کا احساس زندگی سے بڑھ
مزید پڑھیے


عورتیں اور فنکار ہمیں ہضم کیوں نہیں ہوتے؟

جمعه 19 جولائی 2019ء
خاور نعیم ہاشمی
یہ بہت ہی اچھی بات ہے کہ آج شو بز کی دنیا میں فنکار بہت اچھے معاوضے لے رہے ہیں، اور بہت سارے تو کراچی اور لاہور کے پوش علاقوں میں اپنے ذاتی گھروں میں بھی رہ رہے ہیں، یہ موج گو سارے فنکارنہیں منا رہے لیکن ماضی کے مقابلے میںآج کے حالات فن اور فنکاروں کیلئے سازگار ہیں، وہ زمانہ جب ہماری فلم انڈسٹری ہمسایہ ملکوں کی فلموں کے بھی چھکے چھڑا رہی تھی اور ایک سے بڑھ کر ایک کامیاب فلم سامنے آ رہی تھی اور پی ٹی وی کے ڈراموں کی پوری دنیا میں دھوم تھی،
مزید پڑھیے


سیاسی قیدی کسے کہتے ہیں؟

بدھ 17 جولائی 2019ء
خاور نعیم ہاشمی
میں بارہ تیرہ برس کا تھا جب پہلی بار کسی سیاسی قیدی کو دیکھا، کسی کے ساتھ میو اسپتال گیا تھا، شدید گرمی کے دن تھے، مریض کی عیادت کے بعد واپس آتے ہوئے ایک لحیم شحیم شخص زنجیروں میں جکڑا ہوا اسپتال کے وارڈ کے دروازے پر لیٹا ہوا تھا، گورے چٹے رنگ کا چالیس برس کی عمر کا یہ قیدی پسینے سے شرابور تھا، وردیوں میں ملبوس کئی پولیس اہلکاروں نے اس کے ارد گرد آہنی زنجیروں کی طنابیں سختی سے ہاتھوں میں تھام رکھی تھیں، یہ زمانہ تھا ایوب خان کی آمریت کا، نام نہاد سول حکومت
مزید پڑھیے


بات بڑھتی چلی جا رہی ہے

اتوار 14 جولائی 2019ء
خاور نعیم ہاشمی
اصل جرم یہ نہیں کہ جج ارشد ملک نے کیا کیا؟ اصل جرم یہ ہے کہ ن لیگ اور شریف خاندان نے ایک انڈر ٹرائل آدمی کو سزا سے بچانے کیلئے جج کو خریدنے کیلئے ہر حربہ استعمال کیا جو مقدمے کی سماعت کر رہا تھا، بد قسمتی یہ بھی ہے کہ میرے سمیت زیادہ تر لکھاریوں کے قلم کا ٹارگٹ جج صاحب ہی ہیں، شایدآج کے کالم میں بھی آپ کو یہی جھلک نظرآئے۔لیکن حقائق کو دونوں جانب سے چانچنا مجھ نا چیز کی ذمہ داری بھی ہے میں سمجھتا ہوں ۔ ٭٭٭٭٭ کالعدم شہزادی مریم نواز کی جانب سے
مزید پڑھیے


کالعدم شہزادی کا انتقام

جمعه 12 جولائی 2019ء
خاور نعیم ہاشمی
مریم نواز نے احتساب عدالت کے جج کی ویڈیو لیک کرکے یقیناً بہت بڑا جرم کیا ہوگا، اس جرم کو ن لیگ ’’شہزادی کا کھڑاک‘‘ قرار دے رہی ہے، ایک ایسا کھڑاک جو کسی گنڈاسے سے نہیں الیکٹرونک آلات کی مدد سے کیا گیا ،جس کی گونج پوری دنیا میں سنی گئی، ہاں یہ انتقام کا کھڑاک بھی ہے، نواز شریف کی بیٹی کی جارحانہ مزاحمتی سیاست نے ایوانوں کے ایوان ہلا کر رکھ دیے ہیں، لیکن پہلا اور آخری سوال یہ ہے کہ اس ’’عظیم ثبوت‘‘ کو مریم نواز اعلی عدالتوں کے سامنے لے کر کیوں نہ گئیں؟احتساب عدالت
مزید پڑھیے