BN

ظہور دھریجہ


نیب کی طرف سے شہباز شریف کی طلبی


چولستان ڈویلپمنٹ اتھارٹی کیس میں نیب نے قائد حزب اختلاف شہباز شریف کو شامل تشویش کرتے ہوئے 18 مئی تک جواب طلب کر لیا ۔ نیب کے اعلامیہ کے مطابق چولستان ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے افسران ، عہدیداران کے ساتھ ساتھ سابق رکن قومی اسمبلی میاں بلیغ الرحمن اور چوہدری عمر محمود کے خلاف بھی کاروائی کی جا رہی ہے ۔ اچھی بات ہے کہ نیب چولستان کی اراضی بارے تحقیقات کر رہا ہے ۔ اس سے پہلے قومی خزانہ لوٹنے کے حوالے سے تحقیقات ہوتی رہی ہیں ، ہم نے بارہا کہا کہ ناجائز الاٹمنٹیں بھی کرپشن کے زمرے میں
اتوار 10 مئی 2020ء

عثمان خان بزدار کا احسن اقدام

هفته 09 مئی 2020ء
ظہور دھریجہ
وزیراعلیٰ سردار محمد عثمان بزدار نے وزارت اطلاعات و ثقافت پنجاب کو ہدایت کی ہے کہ صوبائی حکومت کی طرف سے ادبی و ثقافتی اداروں سے وابستہ افراد کی گرانٹ مستحقین تک فوری پہنچائی جائے ۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ کورونا لاک ڈاؤن سے سب متاثر ہوئے ، فنکاروں سمیت سب سے ہمدردی ہے ۔فنکار کسی بھی ملک کا قومی اثاثہ ہوتے ہیں ، میں نے گزشتہ روز کے کالم میں لکھا تھا کہ وزیراعلیٰ کی طرف سے فنکاروں کیلئے اعلان کئے گئے فنڈز کی تقسیم عید سے پہلے ہونی چاہئے ۔ مجھے خوشی ہے کہ وزیراعلیٰ نے بروقت قدم
مزید پڑھیے


محرومیوں کے شکار چولستان کے ثقافتی رنگ

جمعه 08 مئی 2020ء
ظہور دھریجہ
چولستان کے عالمی شہرت یافتہ فنکار کرشن لعل بھیل گزشتہ روز رحیم یارخان میں فوت ہو گئے ، بلا شبہ ان کی وفات پورے وسیب کیلئے صدمے کا باعث ہے ۔ کرشن لعل بھیل نے اپنی آواز اور اپنے ثقافتی انداز سے پوری دنیا کو متاثر کیا اور ان کا فن چولستان کی پہچان بنا ۔ کرشن لعل بھیل نے چاروں صوبوں میں اپنے فن کا مظاہرہ کرنے کے ساتھ ساتھ انڈیا ، دبئی سمیت بہت سے دیگر ملکوں میں پرفارم کر کے پاکستان کا نام روشن کیا ، ان کی زبان سرائیکی اور مارواڑی تھی، وہ اپنی زبان میں
مزید پڑھیے


18ویں ترمیم کے خاتمے کا شوشہ

جمعرات 07 مئی 2020ء
ظہور دھریجہ
آج 6مئی 2020ء کے روزنامہ 92 نیوز میں شائع ہونے والی تین خبروں کے حوالے سے بات کروں گا ۔ لاہور کے رپورٹر رانا عظیم کی فائل کی گئی ایک خبر کے مطابق حکومت نے اپوزیشن جماعتوں کے متحد ہونے کے ڈر کے پیش نظر 18 ویں ترمیم کے خلاف کام سست کرنے کا فیصلہ کر لیا ۔ لیکن سوال یہ ہے کہ اٹھارہویں ترمیم کا شوشہ کیوں چھوڑا گیا ۔ تحریک انصاف کی حکومت نے 2018ء کے الیکشن میں اپنے ووٹروں سے 18 ویں ترمیم کے خاتمے کا وعدہ نہیں کیا تھا ۔ الیکشن کے دوران تحریک انصاف نے
مزید پڑھیے


کورونا سے خوف کی فضاء ختم ہو رہی ہے

بدھ 06 مئی 2020ء
ظہور دھریجہ
وزیر اعظم عمران خان نے کہا ہے کہ کورونا وائرس کو کنٹرول کیلئے سارے وسائل استعمال کر رہے ہیں۔ کورونا سے خوف کی فضاء ختم ہو رہی ہے۔ اپنے مشیر ڈاکٹر بابر اعوان سے ملاقات کے دوران وزیر اعظم نے کہا کہ بہتر حکمت عملی کے تحت ہم نے ریلیف پیکیج کو آگے بڑھایا۔ جب سے کورونا آیا ہے کان اچھی خبر کو ترس گئے تھے، وزیر اعظم کی طرف سے خوف کی فضاء ختم ہونے کی بات بھی خوشخبری کے زمرے میں آتی ہے۔ آج صبح وبائی امراض کی تاریخ کے بارے میں پڑھ رہا تھا تو گزشتہ صدی
مزید پڑھیے



آزادی صحافت کا عالمی دن

پیر 04 مئی 2020ء
ظہور دھریجہ
گزشتہ روز صحافت کا عالمی دن خاموشی سے گزر گیا، کورونا لاک ڈائون کے باعث نہ صرف پاکستان بلکہ دنیا میں کہیں بھی تقریبات کا اہتمام نہ کیا جا سکا، غیر جمہوری ملکوں میں اظہار رائے کی آزادی نہیں ہوتی وہاں سرکاری میڈیا درباری میڈیا بن جاتا ہے۔ زیادہ دور نہ جائیں برصغیر جنوبی ایشیاء کی تاریخ ہمارے سامنے ہے، ہندوستان میں 800 سالہ بادشاہت میں اظہار رائے کی آزادی کا مفقود ہونا سمجھ آتا ہے مگر ہندوستان پر قبضے کے بعد ان انگریزوں نے بھی صحافت کا گلا دبائے رکھا ۔ پاکستان میں میڈیا کو جو آزادی حاصل ہے
مزید پڑھیے


18 ویں ترمیم اور وسیب

اتوار 03 مئی 2020ء
ظہور دھریجہ
آج کل 18 ویں ترمیم کے بارے میں بحث ہو رہی ہے اور تحریک انصاف کی حکومت کا کہنا ہے کہ ہم 18و یں ترمیم کو بہتر کرنا چاہتے ہیں ۔ خصوصاً 18 ویں ترمیم میں صوبوں کو اختیارات کے بارے میں تحریک انصاف کی حکومت کو تحفظات ہیں ۔ 8 اپریل 2010ء کو قومی اسمبلی سے 18 ویں ترمیم منظور ہوئی ،19 اپریل 2010ء کو صدر پاکستان آصف علی زرداری نے بل پر دستخط کئے جس کے بعد یہ آئین کا حصہ بن گئی۔ تحریک کی محرک پاکستان پیپلز پارٹی تھی ، یہ پہلا موقع تھا کہ آصف علی
مزید پڑھیے


وزارت اطلاعات میں تبدیلی

هفته 02 مئی 2020ء
ظہور دھریجہ
وزارت اطلاعات میں تبدیلی کا ہر طرف سے خیر مقدم ہو رہا ہے۔ وفاقی وزیر اطلاعات شبلی فراز نے حلف اُٹھانے کے بعد کہا ہے کہ میں میڈیا اور حکومت کے درمیان پل کا کردار ادا کروں گا۔ وزیر اطلاعات اور معاون خصوصی برائے اطلاعات احسن سلیم باجوہ نے وزیر اعظم عمران خان سے بھی ملاقات کی ہے اور اُن سے نئی ہدایات حاصل کی ہیں۔ چیئرمین سینٹ صادق سنجرانی اور وفاقی وزراء مخدوم شاہ محمود قریشی، زرتاج گل و دیگر نے شبلی فراز اور عاصم باجوہ کو وزیر اعظم کی بہترین چوائس قرار دیا ہے۔ اے پی این ایس
مزید پڑھیے


ڈیجیٹل دور اور کتاب دوستی

جمعرات 30 اپریل 2020ء
ظہور دھریجہ
اس بارکتابوں کا عالمی دن 23 اپریل خاموشی سے گزر گیا۔ اس دن کے منانے کا مقصد ’’کتاب دوستی‘‘ ہے۔ سرائیکی کہاوت ’’لکھیا لوہا، الایا گوہا‘‘ یعنی زبانی بات جو تحریر میں نہ آسکے راکھ ہے جبکہ تحریر لوہے کی مانند ہے دوسری ملکوں کی طرح پاکستان کتاب کا عالمی دن منایا تو جاتا ہے مگر حکومت کی توجہ کتاب کی طرف بہت کم ہے۔ ہر سال کتابوں کا عالمی دن خاموشی سے گزر جاتاہے۔ سرکاری سطح پر کوئی تقریب منعقد نہیں کی جاتی 23 اپریل کو کتاب کے عالمی دن کو شیکسپیئر سے کیوں منسوب کیا گیا؟ اس کی
مزید پڑھیے


شبلی فراز، عاصم باجوہ اور دیوانہ

بدھ 29 اپریل 2020ء
ظہور دھریجہ
شبلی فراز ، عاصم باجوہ اور بشیر دیوانہ صادق آبادی کے عنوان کا مطلب مذکورہ شخصیات کا تقابلی جائزہ نہیں بلکہ یہ عرض کرنا ہے کہ گزشتہ روز جو واقعات ہوئے ان کے مطابق وزیر اعظم کی معاون خصوصی محترمہ فردوس عاشق اعوان کی چھٹی ہو گئی اور معروف شاعر احمد فراز کے صاحبزادے شبلی فراز وفاقی وزیر اطلاعات بنا دیئے گئے اور صادق آباد سے تعلق رکھنے والے جنرل (ر) عاصم سلیم باجوہ کو وزیر اعظم کے معاون خصوصی برائے اطلاعات کا منصب ملا۔ جہاں خوشی وہاں غم، کے مصداق تیسری بات یہ ہوئی کہ صادق آباد سے تعلق
مزید پڑھیے