BN

مریم ارشد


تْو چل میں آیا۔۔۔۔!


ہمارے بچپن میں پہلیاں بْوجھنے اور بیت بازی کھیلنے کا بہت رواج تھا۔ آج ایک پہیلی یاد آ رہی ہے۔ ’’تْو چل میں آیا‘‘۔ اس کا جواب ہوتا تھا ’’دروازہ‘‘۔ چونکہ دروازہ کے دو پٹ ہوتے ہیں۔ پہلے ایک پَٹ بند ہوتا ہے پھردوسرا۔ یاد رکھیے دروازہ ہمیشہ اند رسے کْھلتا ہے۔ چاہے محبت کا ہو یا عداوت کا۔ ایک گرما گرم خبر ہے کہ سابق وزیرِ خزانہ اسحاق ڈار صاحب بالآخر کمر درد سے نجات پانے کے بعد واپس وطن عزیز میں تشریف لا چکے ہیں۔ آئیے! حضور، قدم رنجہ فرمائیے! عوام آپ کو پخیر راغلے کہتے ہیں۔ دیدہ
جمعرات 29  ستمبر 2022ء مزید پڑھیے

ہماری ثقافت !

اتوار 25  ستمبر 2022ء
مریم ارشد
سیاست کے تو رنگ ڈھنگ ہی نرالے ہیں۔آج تک سیاست کی تو باگیں ہی کسی کے قابو میں نہیں آئیں۔ آج میرے دل میں خیال آیا کہ کیوں نہ سیاست کو چھوڑ کے اپنی مدھم ہوتی ہوئی ثقافت پر بات کی جائے۔ وہ ثقافت جو مختلف سوشل میڈیا پلیٹ فارمز کی وجہ سے اڑنے ولی دھول دھندلاتی جا رہی ہے۔ پنجاب، سندھ، بلوچستان، اور خیبر پختونخوا کی زرخیز مٹی محبتوں، روایتوں اور داستانوں سے گْندھی پڑی ہے۔کہیں سوہنی مہینوال، کہیں سسی پنوں، کہیں عمر ماروی، کہیں لیلیٰ مجنوں کی کہانیوں کی مہک باغِ دل پر کلیوں کی صورت چٹکتی
مزید پڑھیے


پاکستان مسائل کا پہاڑ

هفته 17  ستمبر 2022ء
مریم ارشد
پا کستان مسئلوں کا ایک ایسا پہاڑ ہے جس سے جتنے پتھر توڑے جائیں پہاڑ چھوٹا ہونے میں نہیں آتا۔ ہمارے حصے کی دْھوپ ہماری زمین تک آتی ہی نہیں۔ اس چٹیل پہاڑ کی وجہ سے ہماری سر سبز زمیں کلر زدہ ہوتیجا رہی ہے۔ لہلہاتا سبزہ اور فصلیں اس زمین میں بنجر ہوئی جاتی ہیں۔ اب رہی سہی کسر سیلاب نے پوری کردی۔ کھڑی فصلیں تباہ ہو گئیں۔ لوگوں کے کچے پکے مکانات بہہ گئے۔ سیلاب سے مزید اموات ہو رہی ہیں۔لاکھوں متاثرین فاقوں پر مجبور ہیں۔ سیلابی علاقوں میں لوگ درختوں کی ٹہنیوں پر چادریں ڈال کر خیمے
مزید پڑھیے


سسکتے عوام، آئین اور جمہوریت

جمعه 09  ستمبر 2022ء
مریم ارشد
انسان کی زندگی میں سب سے بڑی اور قیمتی دولت وقت ہے۔ کرونا وائرس کے بعد ویسے بھی دنیا میں وقت ایک نئی دولت کی اصطلاح کے طور پر استعمال ہونا شروع ہوا ہے۔ سیاسست اور جلسے میں بھی عوام اپنا قیمتی وقت لے کر حاضر جلسہ ہوتی ہے۔ جلسوں میں شرکت کرنے کی بہت سی وجوہات ہوتی ہیں۔ جب کوئی لیڈر یا سیاست دان عوام کا لہو گرماتا ہے اور عوام کے غاصبانہ حقوق کے تحفظ کے بارے میں بات کرتا ہے تو عوام جادوئی انداز میں اس کے پیچھے پیچھے چل پڑتی ہے۔ در حقیقت عوام کو اس
مزید پڑھیے


خط بنام نیئرہ نور

جمعرات 01  ستمبر 2022ء
مریم ارشد
پیاری نیئرہ نور جی! آپ سے دل اور روح کا تعلق ہے۔ پھْولوں جیسی نرم فطرت والی پْروقار سی شخصیت تھیں آپ۔ سنجیدگی آپ کے حْسن کا انمٹ حصہ تھی۔ شاید آپ جنم سے ہی ایسی ہوں گی۔ آپ سے ملاقات کی تمنا ہمیشہ دل کی گہرائیوں میں موجزن رہی۔ مگر بے در د زمانے کی وجہ سے ایک لکیر جو عام آدمی اور فنکار کے درمیان کھینچی رہتی ہے رہی، کبھی یہ تمنا پوری نہ ہوئی۔ سوچا بھی نہیں تھا کہ آپ یوں اچانک راہِ عدم کو روانہ ہوجائیں گی۔ تخلیق کا سفر انسان کو اندر سے بے چین کیے
مزید پڑھیے



جمہوری ریاست میں معاملات کو سلجھانا

جمعرات 25  اگست 2022ء
مریم ارشد
کالم بھی ایک دعا ہوتی ہے۔ بس خدا کرے کہ یہ سب دعائیں جو ہم کالم کے ذریعے مانگتے ہیں وہ پوری ہوجائیں۔ آج دل نے تمنا کی کہ جمہوری ریاست کے الجھے ہوئے معاملات پر بات ہو جائے۔ حکومت کو آزاد اور خود مختار ریاست بنانے کے لیے کئی اقسام کے داخلی اور خارجی مسائل اور تنازعات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ جمہوری ریاست میں معاملات کو سلجھانے کے لیے قائدانہ صلاحیتوں والے لیڈروں کی ضرورت ہوتی ہے۔ ایک کامیاب لیڈر جمہوری مزاج کا حامل ہوتا ہے نا کہ مطلق العنان اور خود مختار۔قومی آزادی، اقتدارِ اعلیٰ اور قومی وقار
مزید پڑھیے


اِس پار سے اُس پار

منگل 16  اگست 2022ء
مریم ارشد
ہجر اور ہجر کا دْکھ، اور ہجر میں چلے جانے والوں کا رنج روح کے رْوئیں رْوئیں میں بس جاتا ہے۔ انتظار آنکھوں میں ٹھر سا جاتا ہے۔ پرانی یادیں کبھی محبتوں اور کبھی نفرتوں کی شکل میں یاد آتی ہیں۔ دن بہت پْر آشوب اور قیامت صغریٰ سے کم نہیں تھے۔ سرحد کے دونوں طرف اِس پار اور اْس پار لوٹ کھسوٹ زوروں پر تھی۔ ایک طرف آزادی اور امید کی کرنیں تھیں تو دوسری طرف برطانیہ کی حکومت کا عظیم الشان تاج زوال پذیر ہو رہا تھا۔ اگست کے اس رطوبت بھرے مہینے میں لاکھوں مسلمانوں اور ہندوؤں
مزید پڑھیے


پانی پہ تیرتی محبوب لاشیں

بدھ 03  اگست 2022ء
مریم ارشد
بارش اور آندھی جب طوفان کی شکل اختیار کرلے تو وہ قدرت کی ان طاقت ور آفات میں شامل ہوجاتی ہیں جو چیزوں کو اِدھر سے اْدھر منتقل کرتی رہتی ہیں۔پانی حد سے بڑھ جائے تو سب کچھ غارت اور برباد کردیتا ہے۔ پانی مختلف تہیں کھولتا ہے اور زمینی خداؤں کو للکارتا ہے۔ کچھ ایسے ہی حالات اِن دنوں پاکستان میں بھی ہیں۔ سیلابی ریلوں نے تو سب حدیں ہی مٹادیں۔ ہر طرف پانی ہی پانی ہے۔ شناخت دشوار ہے کہ کہاں مکان تھے، کہاں کھیت تھے اور کہاں ڈھور ڈنگر تھے۔ ملک بھر میں حالیہ بارشوں
مزید پڑھیے


مٹی پاؤ جی!

منگل 26 جولائی 2022ء
مریم ارشد
ایک زمانے میں چوہدری شجاعت حسین صاحب کا ایک فقرہ بہت مقبول ہوا کرتا تھا۔ میں نے آج اپنے کالم کا عنوان اسی پر رکھا ہے۔ پنجاب اسمبلی کے ڈپٹی سپیکر دوست محمد مزاری نے 22جولائی کو ووٹ ڈالنے والوں کی پوری کارروائی مکمل ہونے کے بعد خط نکالااور آناً فاناً اپنا فیصلہ سْنایا کہ چوہدری شجاعت حسین کے مطابق ق لیگ کے دس ووٹ شمار نہیں کیے جاسکتے لہٰذا حمزہ شہباز ہی دوبارہ وزیر اعلیٰ بنیں گے۔ اس پر بلاول زرداری جو اپنا تخلص بھٹو استعمال کرتے ہیں، نے ٹویٹ کیا ’’ایک زرداری سب پہ بھاری‘‘۔ کیسا تابعدار
مزید پڑھیے








اہم خبریں