BN

٩٢ کے نام



فیس ماسک کی مصنوعی قلت

هفته 29 فروری 2020ء
مکرمی ! کرونا وائرس کے مریضوں کی کراچی میں تصدیق کے بعد ملک بھر میں ماسک کی شدید قلت پیدا ہو گئی ہے گزشتہ راقم میڈیکل سٹور پر میں کھڑا دوائی لے رہا تھا ۔ ایک آدمی آیا اور ماسک طلب کیا ۔ جواب ملا ، ماسک نہیں ہے ۔ آدمی چلا گیا تو میڈیکل سٹور کا وہ ملازم دوسرے سے کہنے لگا ’’ابھی ماسک سنبھال کر رکھو ، ابھی مہنگے ہونے ہیں ، پھر انہیں نکالیں گے‘‘ … یہ ہے ہماری ذہنیت ، ہر چیز میں ، ہر موقع پر محض اپنا مفاد دیکھتے ہیں ۔
مزید پڑھیے


دہلی فسادات: مسلمان ہونے کی سزا

هفته 29 فروری 2020ء
خورشید کا گھر مسلمانوں کے ان آٹھ گھروں میں شامل تھا جن کو دہلی کے اس محلے میں ہندو بلوائیوں نے منگل کی سہ پہر اس وجہ سے نشانہ بنایا کیوں کہ وہ مسجد کے نزدیک تھے۔ ہندو اکثریتی محلے میں بلوائیوں نے مسلمانوں کے گھروں میں توڑ پھوڑ کی، یہاں لوٹ مار کی اور پھر انہیں نذر آتش کر دیا۔مسجد پر بھی حملہ کیا گیا جو گزشتہ تین روز سے جاری مذہبی فسادات کی ایک کڑی تھی جس میں اب تک 36 افراد کی جان لی چکی ہے۔خورشید کا کہنا ہے 400 بلوائیوں کا جتھا منگل کی صبح
مزید پڑھیے


ٹرمپ، مودی اور عمران زندہ باد

هفته 29 فروری 2020ء
ٹرمپ کے دورہِ بھارت سے جہاں مودی کی چھپن انچ کی چھاتی مزید پھول گئی ہے، وہیں عمران خان کی چھاتی کے زیروبم میڈیا پر بھاری پڑ رہے ہیں۔ ٹرمپ تو واپس چلے گئے مگر بھارتی میڈیا اب تک سوگ میں ہے اور پاکستانی میڈیا شہنائی بجارہا ہے۔ دونوں ملک ٹرمپ سے خوش ہیں کہ انہوں نے اس نازک ترین دور میں دونوں رہنماؤں کا مان اور سمان رکھا۔مودی کے سامنے عمران کو دوست قرار دینا آسان نہیں تھا مگر ٹرمپ نے یہ رسک لے لیا۔ بعض دانش ور اس کے پیچھے کسی پالیسی کا عندیہ دیتے ہیں، جس
مزید پڑھیے


لیبر پالیسی :ایک کٹھن چیلنج

هفته 29 فروری 2020ء
پاکستان میں سیاسی پارٹیوں میں لیبر ونگز کی تنظیم نو کرنا مریخ پر شہر آباد کرنے کے مترادف ہے۔پاکستانی معاشرے میں ہر طبقہ ہائے فکر میں استحصالی گروہ بری طرح سرایت کر چکا ہے۔ایسا بھی نہیں کہ ہمارے ہاں قوانین موجود نہیں بلکہ یہاں تو ضرورت سے بھی زیادہ قوانین موجود ہیں۔ قوانین کی بہتات‘تضادات اور عملدرآمد نہ ہونے کی وجہ سے قانون شکنی فیشن بن چکی ہے۔ حکومتی سطح پر قلیل المدتی معاشی مفادات کے لئے قوانین پر عملدرآمد کے حوالے سے سمجھوتہ کیا جاتا ہے۔سرمایہ دار سیاسی اشرافیہ کے ساتھ مل کر نہ صرف آئین پاکستان میں فراہم کئے
مزید پڑھیے


کرونا وائرس ۔۔۔ایک خاموش پیغام سب کے لیے

جمعه 28 فروری 2020ء
مکرمی !آج جب چین پہ کرونا وائرس کی صورت میں مشکل گھڑی آئی ہے تو ہم مزاحیہ پوسٹ وائرل کی جا رہی ہیںکہ اِن پر اللہ کا عذاب ہوا ہے۔یہ مردار کھانے والے لوگ ہیں۔چین کی ڈیڑھ ارب کی آبادیمردار کھاتی ہے مگر کسی کا حق کھاتے انہیں نہیں دیکھا۔کہیں نہیں دیکھاکہ کسی پانچ سات سال کی بچی سے زیادتی ہوئی ہو۔کہیں کرپشن نہیں۔کہیں دھوکادہی نہیں۔کہیں نہیں دیکھا کہ راہ چلتی عورت کو بھوکے کتے کی طرح تاڑتے ہوں۔ کہیں ملاوٹ نہیں دیکھی۔ جان مال اور عزتیں محفوظ۔گدھے کا گوشت فروخت ہوتاہے تو وہ گدھاہی ہوتا ہے۔
مزید پڑھیے




مسلمانوں کا رستا خون اور ٹپکتے آنسو

جمعه 28 فروری 2020ء
مکرمی!عصرِحاضر میں اگر پوری دنیا میں مظلوم ہیں تو فقط مسلمان ہیں جن کی مظلومیت کی آہ و بکا سن کر انسانیت کے علمبر دار بھی خاموش ہیں کیونکہ یہ مسلمانوں کا معاملہ ہے۔آخر مسلمان کا خون اتنا سستا کیوں؟جس طرح بھارتی حکمران جو اپنی حکومتی مشینری کے ذریعے کئی دنوں سے کشمیری اور بھارتی مسلمانوں پر ظلم کے پہاڑ توڑ رہے ہیں۔پولس کی سرپرستی میں ہندو نوجوانوں کے ہاتھوں میں تشدد و نفرت کی لاٹھیاں اور ہتھیار تھماکر انسانیت کی حرمت کو روندا جارہا ہے۔مذہب کی بنیاد پر زور آزمائی کی جا رہی ہے۔مسلمانوں کو پکڑ پکڑ کر
مزید پڑھیے


اکھنڈ بھارت کی جانب اہم قدم

جمعه 28 فروری 2020ء
بھارت میں عمومی رائے یہ ہے کہ حکومت کی جانب سے آئین کے آرٹیکل 370 کے خاتمے کے بعد کشمیر کا مسئلہ حل ہو چکا ہے۔اس دعوے کو تقویت دینے کیلئے مودی حکومت یہ کہتی ہے کہ پانچ اگست کو کئے گئے فیصلے کے بعد وادی میں بڑے پیمانے پر تشدد کے واقعات رونما نہیں ہوئے ۔ لہذا کشمیریوں نے بھارتی حکومت کے اس بڑے فیصلے کو قبول کر لیا ہے۔ بھارت کشمیر کو اپنا اندرونی معاملہ سمجھتا ہے۔ پاکستان کا دعویٰ یہ ہے کہ کشمیر تقسیم ہند کا نامکمل ایجنڈہ ہے جس کو حل کرنے کی ضرورت ہے۔کشمیری
مزید پڑھیے


"پانی کا مسئلہ"

جمعرات 27 فروری 2020ء
مکرمی!میں آپ کے اخبار کے توسط سے حکام بالا کی توجہ ایک انتہائی سنگین مسئلہ کی جانب کروانا چاہتی ہوں کراچی جو کہ پاکستان کاسب سے بڑا شہر ہے اور تجارتی شہر بھی ہے ۔یہاں پانی کا بحران طول پکڑچکا ہے ۔کتنے ہی سالوں سے عوام کوپانی کی قلت کا سامنا ہے پانی یا تو آتا ہی نہیں اگرآتا ہے تو گٹر کا پانی ہوتا ہے جس میں مضر صحت عناصرموجود ہوتے ہیں ۔ پانی کی پائپ لائز پھٹی ہوئی ہیں جو کئی کئی دن تک پھٹی ہی رہتی ہیںں اور کئی ہزارگیلن پانی سڑکوں پر ضائع
مزید پڑھیے


موت اس کی ہے کرے جس پہ زمانہ افسوس

جمعرات 27 فروری 2020ء
منی پاکستان کراچی کی روشنیاں ،رونقیں لوٹانے والے نعمت اللہ خان دنیا سے رخصت ہو گئے ان کی نماز جنازہ پر اہلیان کراچی امڈآئے نعمت اللہ خان سے کراچی کا درد مشترک قد ر مشترک والا حسن سلوک تھا یوں محسوس ہوا کہ کراچی کے عوام دعویٰ کر رہے تھے کہ نعمت اللہ خان کا جسد خاکی ان کے گھر سے روانہ ہوا ہے نعمت اللہ خان شاندار کامیاب اور مثالی زندگی گزار کر مہلت زندگی پوری کر گئے محب دین محب وطن محب عوام نفس مطمئنہ دار فانی سے چلا گیا وہ محنت کرنے اخلاص امانت دیانت سے
مزید پڑھیے


فضائل سیدنا خواجہ اویس قرنی رضی اللہ عنہ،احادیث مبارکہ کی روشنی میں

جمعرات 27 فروری 2020ء
حضرت سیدنا خواجہ اویس قرنی رضی اللہ عنہ کا تذکرہ سرکارِ دو عالم نور مجسم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کی احادیث میں بھی ملتا ہے ۔چند احادیث کو حضرت علامہ جلال الدین سیوطی رحمۃ اللہ علیہ نے اپنی تصنیف ’جمع الجوامع‘ میں حضرت شیخ عبد الحق محدث دہلوی رحمۃ اللہ علیہ نے شرح مشکوٰۃ کے آخر ی باب تذکرہ یمن و شام کے تحت اور حضرت ملا علی قاری رحمۃ اللہ علیہ نے رسالہ معدن العدنی میں تحریر فرمایا ہے ۔ان احادیث کا مفہوم کچھ اس طرح ہے ۔ 1 ۔سرکار دو عا لم نور مجسم صلی اللہ علیہ وآلہ
مزید پڑھیے