٩٢ کے نام


پرانے طیارے گرائونڈ کیے جائیں

اتوار 24 مئی 2020ء
مکرمی !پچھلی چند عیدیں ہم نے دردناک اور کرب ناک خبروں کے ساتھ گزاریں ہیں۔ٹرین حادثہ ہو یا آئل ٹینکر کا سانحہ ہم نے جلی کٹی لاشوں کے مناظر کے ساتھ پرنم آنکھوں کے ساتھ عید گزاری ہے۔اجتماعی اموات کے یہ دل خراش واقعات پورا سال ہمارے دل و دماغ پر نقش رہتے ہیں۔بد قسمتی سے ہم نے انسانوں سے زیادہ مشینوں کو ترجیح دی ہے۔ملتان اور گلگت کے حادثات کے بعد ہماری آنکھیں کھل جانی چاہیے تھیں کہ اب ان پرانے طیاروں یعنی ائیر بسز کو گرائونڈ کر دینا چاہیے تھا۔مگر نہیں ہم تو انتظار کرتے ہیں نئے
مزید پڑھیے


صحت بخش دودھ زہرکیسے بنا

اتوار 24 مئی 2020ء
مکرمی !دودھ کودنیابھرمیں صحت کیلئے انتہائی مفید ترین غذاتسلیم کیاجاتاہے۔ زیادہ تر علاقوں میںگائے ، بھینس بھیڑ، بکری اُونٹنی کا دودھ استعمال کیا جاتا ہے۔ماہرین صحت کے مطابق دودھ بیماریوں سے لڑنے کے لئے قوت مدافعت پیدا کرتا ہے۔کئی اقسام کے زہروں کا اثر ختم کرنے کی طاقت رکھتا ہے۔دودھ میں 3.2 فیصد پروٹین ، 4.1 فیصد کولیسٹرول،8فیصد آیوڈین ، 120 ملی گرام کیلشیم ،90 ملی گرام فاسفورس،2 ملی گرام آئرن اور وٹامن اے ،بی ،سی پائے جاتے ہیں۔۔ماہرین صحت کے مطابق اُونٹنی کے دودھ میں انسولین کی خاصی مقدار موجود ہوتی ہے۔انسولین ایک ہارمون ہے جو ذیابیطس کے مریضوں
مزید پڑھیے


غریب کی عید

اتوار 24 مئی 2020ء
مکرمی !یہ ایامِ عید ہیں۔ محروم، بے حس اور ستم رسیدہ معاشرے میں اس دن سے منسوب خوشیوں کا احساس ایسے پھیل جاتا ہے جس طرح کسی خشک تپتے صحرا میں بارش ہوتی ہے۔ نخلستانوں میں تو یہ بارش مزید ہریالی اور شادابی لاتی ہیں۔ لیکن صحرا میں یہ پھوار ایسے غائب ہوجاتی ہیں جیسے کبھی برستے بادلوں کا گزر ہوا ہی نہیں تھا۔ایسے تہواروں کو ہر معاشرے کی رائج الوقت قدریں اور رحجانات خوشیوں کی امیدوں سے لبریز کر دیتے ہیں۔ لیکن غریب کی دہلیزپر یہ خوشیاں ایسے ہی آتی ہیں جیسے کسی کالے بادلوں کے جھرمٹ کا صحرا
مزید پڑھیے


سورج مکھی کی فصل پر ٹڈی دل کا حملہ

اتوار 24 مئی 2020ء
مکرمی!سورج مکھی کی حالیہ فصل جو تیزی سے برداشت کی طرف بڑھ رہی ہے اس وقت ٹڈی دل کی شدید لپیٹ میں ہے ۔جس سے کسانوں میں شدید تشویش کی لہر پائی جاتی ہے۔محکمہ زراعت کی عدم توجہی اور ماہرانہ مشاورت سے محرومی نے صورت حال کو مزید گھمبیر کر رکھا ہے اگر اس حساس صورت حال پر بر وقت قابو نہ پایا گیا تو خوردنی تیل کی فصل نہ صرف پیداوار میں کمی کے باعث کسان کشی و استحصال کا باعث ہو گی تو وہاںتیل کی ملکی ضرورت، غذا میں بڑھتے روغنیات کے استعمال سے خوردنی تیل کی طلب
مزید پڑھیے


حادثات میں اضافہ،حکومتی کلچر برقرار،فضائی پالیسی بدلنی ہوگی

اتوار 24 مئی 2020ء
تجزیہ:سید انور محمود ہوائی حادثات بار بار ہوتے رہیں گے ،قیمتی جانیں ضائع ہوتی رہیں گی، اہل خانہ کو دل سوز خبریں ملتی رہیں گی، اس کے باوجود پاکستان میں حکمرانی کا کلچر تبدیل نہیں ہوگا اور یہ ایک بہت بڑا المیہ ہے کیوں کہ موجودہ طرز حکمرانی اور لاپرواہی پاکستانیوں کی زندگیوں میں اس طرح کے سانحات لاتی رہے گی۔ ذرا جمعہ کی سہ پہر کراچی ایئرپورٹ کے قریب پی آئی اے پرواز کے تازہ المناک حادثے کی وجوہات کی تفتیش کیلئے قائم کی گئی انکوائری کمیٹی ملاحظہ کریں، کوئی تعجب نہیں کہ پی آئی اے پائلٹ ایسوسی ایشن چیخ
مزید پڑھیے



کورونا وائرس یا معاشی قتل عام

هفته 23 مئی 2020ء
مکرمی ! کوورنا کے باعث 1کروڑ80لاکھ افراد کے بے روز گار ہونے اور 7کروڑکے غربت کی سطح سے نیچے جانے کا خدشہ ہے معاشی نقصان کے ان ہی خدشات کے پیش نظر یورپی ممالک میں لاک ڈاؤن عملی طور پر ختم ہوچکا ہے گرجا گھر،ریستوران،اسٹورز،نان بائی ،سنیماٹھیٹرز کھولنے کی بھی اجازت دے دی گئی ہے اور امریکا میں کورونا سے سب سے زیادہ متاثر بڑے کاروباری شہر نیویارک میں بھی جلد لاک ڈاؤن ختم کئے جانے کی اطلاعات ہیںایسے میں ہمارے معاشی طور پر بد و تباہ حال ملک کے وفاقی اور صوبائی حکمرانوں نے ہفتے میں 4روز کاروبار کھولنے
مزید پڑھیے


عید شاپنگ اور کورونا

هفته 23 مئی 2020ء
مکرمی !خوفناک کورونا وائرس کی وبائی بیماری بہت تیزی سے پھیل رہی ہے کیونکہ ہماری حکومت الجھن میں ہے۔ لاک ڈاؤن کو آسان کرنے کے بعد عید کے نزدیک خریداروں کا بہت زیادہ رش تھا۔ گھبراہٹ میں ، ریاست نے اس امید پر خریداری کے لئے مخصوص دن ایک ہفتے میں پانچ سے گھٹا کر چار کردیے تھے کہ اس سے خریداروں کی تعداد کم ہوجائے گی۔ واقعتاً یہ ہوا ہے کہ خریداروں کی تعداد وہی رہی ، اس سے ہر مارکیٹ میں افراد کی کثافت میں اضافہ ہوا ، جس سے انسانی رابطے کے امکانات بڑھ
مزید پڑھیے


کورونا تعلیم کی راہ میں رکاوٹ!

هفته 23 مئی 2020ء
مکرمی ! کورونا وائرس نے پوری دنیا کے نظام کا رخ بدل کر رکھ دیاہے مگر جو تباہی اس نے تعلیمی نظام میں مچائی ہے اس نے نہ صرف حال ہی کو بلکہ آنے والے کل کو بھی اپنی لپیٹ میںلے لیا ہے۔پوری دنیا میں لاک ڈائون ہے۔ تعلیمی ادارے بھی بند کردیے گئے ہیں طالب علموں کی پڑھائی کا حرج نہ ہو اس وجہ سے حکومت نے آن لائن کلاسز کا آغاز کیا ہے ملک بھر میں تو کیا پوری دنیا میں آ ن لائن کلاسز کا نظام جاری ہے مگردیکھا جائے تو آن لائن کلاسز سے دیہی
مزید پڑھیے


کورونا سے جنگ سویڈن کا ماڈل قابل تقلید

هفته 23 مئی 2020ء
ملک میں کورونا وائرس کا بحران مسلسل بڑھتا جارہا ہے۔ 25 مارچ سے نافذ لاک ڈاون کے بعد بھی ملک بھر میں کووڈ۔ 19 سے متاثر لوگوں کی تعداد مسلسل بڑھتی جارہی ہے۔پچھلے تین دن میں ہی کورونا کے 10 ہزار کیسز منظر عام پر آئے حالانکہ اب تک جملہ 22000 لوگ اس سے روبصحت ہوچکے ہیں۔ ان سب انتظامات کے درمیان ساری دنیا میں ایک سوال اٹھ رہا ہے کہ کیا کورونا بحران سے بچنے کے لئے لاک ڈاون ہی واحد راستہ ہے؟ لیکن سویڈن جیسے ملک نے ان سب سے الگ کام کی راہ دکھائی ہے۔سویڈن نے ایسا کیا
مزید پڑھیے


کورونا عذاب ہے یا ثواب

هفته 23 مئی 2020ء
برطانیہ میں چند روز پہلے ایک غیر سرکاری تنظیم نے ویڈیو کانفرنس کے ذریعے لاک ڈاؤن کے دوران بعض لوگوں سے دریافت کرنے کی کوشش کی کہ ان کی زندگی میں کورونا سے کیا تبدیلی آئی۔ ان دو ماہ کی سخت بندشوں کے باوجود انہوں نے کیا کچھ کھویا اور کیا کچھ سیکھنے کو ملا۔جیمز کی عمر تقریباً 75 سال ہے۔ اپنے بیٹے اور بہو کے ساتھ رہتے ہیں۔ انہیں پندرہ مارچ کو اولڈ ہوم منتقل ہونا تھا جس کی خواہش خود جیمز نے اپنے بیٹے اور بہو سے کی تھی۔ اس کی وجہ ان کے بیٹے اور بہو کے
مزید پڑھیے