Common frontend top

BN

یوسف عرفان


پاکستان اور آئی ایم ایف


پاکستان اور آئی ایم ایف(عالمی مالیاتی فنڈ) کے درمیان آنکھ مچولی جاری ہے۔حتمی نتیجہ کیا نکلتا ہے۔کچھ کہنا قبل از قیاس ہے مگر اس حقیقت سے انکار نہیں کہ پاکستان آئی ایم ایف کے سامنے چاروں شانے چت پڑا ہے۔شہ رگ پر ہاتھ ہے‘ چھری نہیں چلی کیونکہ پاکستان آسانی اور خاموشی کے ساتھ خودکشی قبول کرنے کے لئے مکمل طور پر تیار نہیں۔ بعض قائدین کا طائفہ پاکستان کو سری لنکا بننے کی نوید یا وعید کرتا رہتا ہے۔آئی ایم ایف کی تاریخ شاہد ہے کہ وہ سیاسی و تجارتی اہمیت کے حامل ملک کو ڈالرز میں قرض دیتا
جمعرات 26 جنوری 2023ء مزید پڑھیے

پاکستان کا روشن پہلو

جمعرات 19 جنوری 2023ء
یوسف عرفان
سوشل میڈیا اور ابلاغیات کے دیگر ذرائع کے مطابق پاکستان کے حالات دگرگوں ہیں۔ابتری کا سفر جاری ہے‘ بہتری نظر نہیں آتی۔ اس خبر میں کچھ حقیقت ہے اور کچھ افسانہ بھی ۔ اگر افسانہ کہیں تو بہتر ہے۔ دور حاضر میں میڈیا ایک صنعت(کاروباری فیکٹری) بن گیا ہے جس میں انفرمیشن‘ مس انفرمیشن اور ڈس انفرمیشن کی اصطلاحات عام ہیں۔فی الحقیقت میڈیا نے حالات کی کھچڑی بنا دی ہے جس میں امید‘ حوصلہ‘ ہمت‘ جرات‘ صداقت‘ امانت اور ذمہ داری کا فقدان ہے۔خبرکی نوعیت اور کیفیت یہ ہے کہ انسان نے کتے کو کاٹا‘ یہ منفرد خبر ہے جبکہ
مزید پڑھیے


کرو مہربانی تم اہل زمیں پر

جمعرات 22 دسمبر 2022ء
یوسف عرفان
عربی زبان کا مقولہ ہے کہ لِکلِ دائً دَوَائٌ۔ہر مرض کا علاج ہے۔شفا من جانب اللہ ہے مگر علاج معالجے کے لئے مخلصانہ تحقیق اور ایثار پیشہ طریق علاج میں اللہ کی رضا شامل ہوتی ہے کیونکہ اس سے اللہ کی مخلوق کو فائدہ ہوتا ہے اور شعبہ امراض میں ہر دم نئے رویے اور راستے دریافت ہوتے ہیں۔فی الحقیقت بیماری ایک آزمائش اور چیلنج ہے، جو صبر‘ شکر اور ہمت کا درس دیتی ہے یہ اولادِ آدم کے درمیان ہمدردی اور باہمی محبت کو پروان چڑھاتی ہے۔اسی لئے معالج کو مسیحا اور تیمارداری کو عبادت قرار دیا گیا ہے۔مولانا
مزید پڑھیے


سقوط ڈھاکہ۔ایک جائزہ

جمعه 16 دسمبر 2022ء
یوسف عرفان
ماضی کا حقیقت پسندی اور غیر جانبداری سے جائزہ لینا حال اور مستقبل کے لئے بہترین راہنمائی ہے۔ اگر ماضی کا جائزہ بھی حریفوں اور حلیفوں کے پھیلائے ہوئے نام نہاد تحقیقی تجزیوں پر مبنی ہو تو سچائی منوں جھوٹ تلے دب کر رہ جاتی ہے۔اگر سقوط ڈھاکہ کا مطالعہ کیا جائے تو چند باتیں زبان زدعام ہیں کہ جنرل ایوب خان کی آمرانہ پالیسی نے فاصلے اور بدگمانی بڑھائی۔پاکستانی نوکر شاہی کا رویہ انگریز شاہی افسران کا سا تھا۔ایوب خان کی دفاعی پالیسی بالکل غلط تھی کہ مشرقی پاکستان کا دفاع مغربی پاکستان کی ترقی خوشحالی اور عسکری برتری
مزید پڑھیے


قائد اعظم کی شخصیت کے چند گوشے

هفته 10 دسمبر 2022ء
یوسف عرفان
قائد اعظم کی شخصیت کو سمجھے بغیر تحریک پاکستان کی جدوجہد اور قیام پاکستان کے مقصود کو سمجھنا نہ صرف مشکل بلکہ ناممکن ہے۔قائد اعظم کی شخصیت کے کئی پہلو ہیں اور ہر پہلو آئینے کی طرح صاف اور شفاف ہے، بدقسمتی سے قائد اعظم کی شخصیت اور کردار کے بارے میں ان کے عالمی اور مقامی حریفوں نے لکھا ہے جبکہ قائد اعظم کے فکر و عمل کے مداح بے شمار ہیں مگر اکثر و بیشتر نے ناقدین کے اعتراضات کو مدنظر رکھ کر لکھا اور سمجھا۔سمجھنے کی بات یہ ہے کہ قائد اعظم کی شخصیت میں وہ کیا
مزید پڑھیے



اردو زبان قومی نشان

جمعرات 01 دسمبر 2022ء
یوسف عرفان
اردو پاکستان کی قومی زبان ہے، اس کا استعمال بھی قومی وقار کے ساتھ ہونا چاہیے۔بدقسمتی سے پاکستانی اشرافیہ نے قومی زبان کو سرکاری سرپرستی اور ذریعہ تعلیم بننے سے محروم رکھا ہے یہ کیفیت ایسی ہی ہے، جیسے انگریزی ادبیات کے آفاقی شاعر اور ادیب ولیم شیکسپئر کے ساتھ ہوا۔شیکسپیئر نے انگریزی زبان کو رواج دینے کے لئے برطانیہ کے عام عوام کے استعمال کی زبان انگریزی میں لکھا جبکہ برطانوی اشرافیہ انگریزی کو عامی اور عوامی زبان گردانتے تھے اور انگریزی میں بات کرنا اپنی توہین جانتے تھے۔برطانوی اشرافیہ کی محبوب مقبول اور علمی ‘ ادبی اور زبان
مزید پڑھیے


قائد اعظم کی دولت اور وصیت

اتوار 13 نومبر 2022ء
یوسف عرفان
بیورلے نکلس اپنی کتاب بعنوان’’محاکمۂ ہند‘‘ Verdicl on India) میں لکھتے ہیں کہ قائد اعظم ایک دیو قامت شخصیت ہونے کے ساتھ ساتھ ایشیاء کے اہم ترین فرد ہیں۔نیز ایشیاء کی سیاسی تقدیر قائد اعظم کی مرضی کے مطابق طے ہو گی کیونکہ انہوں نے مسلمان عوام کو(ایمان‘ اتحاد تنظیم ) ایشیا کی 7منظم‘ متحد اور موثر ترین سیاسی قوت بنا دیا ہے ،یہ وہی کچھ کریں گے جو قائد اعظم چاہیں۔وہی کچھ سب کو کرنا پڑے گا۔قائد اعظم کی سیاسی کامیابی سب جانتے ہیں۔آج قائد اعظم کی ذاتی شخصیت تجارتی نظم و ضبط اور وکالتی مہارت کے حوالے سے
مزید پڑھیے


پاکستان کا روحانی منظر

منگل 08 نومبر 2022ء
یوسف عرفان
ڈاکٹر نذیر احمد قریشی صاحب لاہور کی ایک منفرد اور نادر روزگار روحانی شخصیت تھے۔انہوں نے پاکستان کے روحانی منظر کو جیسا دیکھا‘ ویسا بیان کیا۔محمد رضا شاہ پہلوی نے خمینی انقلاب کے دبائو کے تحت مذکورہ بالا تاریخ 16جنوری 1979ء کو ایران چھوڑ دیا۔شاہ ایران کی جہاز پر بیٹھنے کی تصویر دنیا بھر کے میڈیا نے دکھائی ۔ڈاکٹر نذیر قریشی نے خبر پر روحانی تبصرہ کرتے ہوئے بتایا کہ ’’بادشاہت ایران میں دوبارہ آئے گی‘‘ پروفیسر محمد منور مرزا نے کہا :کہ ڈاکٹر صاحب! دعا کریں کہ ایران میں اصحابؓ رسولؐ کا لایا ہوا اسلام دوبارہ آ جائے‘‘ ڈاکٹر
مزید پڑھیے


پاک چین مشترکہ پالیسی کی ضرورت

جمعه 04 نومبر 2022ء
یوسف عرفان
پاک چین دوستی کوعالمی طاقتوں نے اس دوستی کو وقتاً فوقتاً نقصان پہنچانے کی کوشش کی مگر وقت نے ثابت کیا کہ یہ دوستی ہمالیہ سے اونچی‘ سمندر سے گہری اور شہد سے زیادہ میٹھی ہے۔پاکستان کی 75سالہ تاریخ میں کئی اہم سنگین اور پیچیدہ مسائل آئے مگر چین نے خندہ پیشانی اور ثابت قدمی کے ساتھ پاکستان کا ساتھ دیا چین اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کا مستقل رکن ہے جس کے باعث امریکہ ‘اسرائیل‘ روس‘ برطانیہ اور بھارت وغیرہ پاکستان کو اپنے پنجے میں دبوچنے اور پائوں تلے روندنے سے باز رہے یہی سبب ہے کہ پاکستان کے
مزید پڑھیے


صدر جوبائیڈن کے بیان کا طائرانہ جائزہ

جمعرات 20 اکتوبر 2022ء
یوسف عرفان
صدر جوبائیڈن جہاندیدہ اور عمر رسیدہ امریکی صدر ہیں جبکہ نائب صدر بھارت نژاد کمیلا ھیرث ہیں، جن کے شوہر ھیرث وکیل ہیں اور عالمی صہیونی تنظیم سے تعلق رکھتے ہیں۔ جوبائیڈن صدر بننے سے پہلے سی آئی اے کی خفیہ منصوبہ بندی اور انتہائی اہم آپریشن کے سربراہ رہے ہیں۔ بعدازاں جوبائیڈن سی آئی اے کے چیف بھی رہے ہیں یعنی ان کی چال گہری اور پوشیدہ ہوتی ہیں‘ اس وقت جوبائیڈن اسی برس کے ہونے کو ہیں۔ یہ غم کشیدہ اور ضعیف بھی ہیں۔ ان کی بیوی‘ بیٹا کار حادثہ میںفوت ہوئے۔ دوسرے بیٹے کو منشیات کی
مزید پڑھیے








اہم خبریں